Thursday, October 22, 2020  | 4 Rabiulawal, 1442
ہوم   > Latest

پاکستان کا پریانکا کو خیرسگالی سفیر کےعہدے سے ہٹانے کا مطالبہ

SAMAA | - Posted: Aug 21, 2019 | Last Updated: 1 year ago
SAMAA |
Posted: Aug 21, 2019 | Last Updated: 1 year ago

وفاقی وزیر انسانی حقوق شیریں مزاری نے اقوام متحدہ کی خیرسگالی سفیر پریانکا چوپڑا کو اقوام متحدہ کے خیر سگالی سفیر کے عہدے سے ہٹانے کا مطالبہ کردیا۔

ایگزیکٹو ڈائریکٹر یونیسف کو لکھے گئے خط میں شیریں مزاری کا کہنا تھا کہ پریانکا چوپڑا کا نام اقوام متحدہ کی خیرسگالی سفیروں کی فہرست سے نکالا جائے۔

 

خط میں کہا گیا ہے کہ مودی کے کشمیریوں کی نسل کشی کے منصوبے نے مقبوضہ وادی میں بحرانی کیفیت پیدا کی، بھارتی حکومت آسام میں 40 لاکھ مسلمانوں کو شہریت دینے سے بھی انکاری ہے، بھارت حکومت نازی عقوبت خانوں کیطرح مسلمانوں کو حراستی مراکز میں قید کر رہی ہے۔

وزیر برائے انسانی حقوق کا کہنا تھا کہ پریانکا کا رویہ امن کے خلاف ہے، پریانکا بھارتی سرکار کے ظلم کی حمایت کررہی ہیں، پریانکا کا رویہ اقوام متحدہ کی ساکھ پر سوالات اٹھاتا ہے۔

خط میں مزید کہا گیا کہ قابض بھارتی افواج مقبوضہ کشمیر میں پیلٹ گنیں استعمال کر رہی ہیں، بھارتی قابض افواج کی جانب سے خواتین کی بے حرمتی کا سلسلہ بھی تیز ہو چکا، بھارتی اداکارہ مودی حکومت کے ظلم اور ہتھکنڈوں کی کھل کر حمایت کر رہی ہے، پریانکا نے بھارتی وزیر دفاع کی پاکستان کو جوہری حملے کی دھمکی کی بھی تائید کی، نام نہاد امن سفیر کا جوہری جنگ کی تائید کرنا اقوام متحدہ کے دیئے اعزاز کیخلاف ہے، بھارتی اداکارہ کا بطور امن سفیر یہ رویہ خود امن کیخلاف ہے، بھارتی اداکارہ خود اقوام متحدہ کی ساکھ کو نقصان پہنچانے کی موجب ہے۔

واضح رہے کہ یونیسیف نے بھارتی اداکارہ پریانکا چوپڑا کو امن کا سفیر مقرر کر رکھا ہے۔

WhatsApp FaceBook

آپ کے تبصرے :

Your email address will not be published.

متعلقہ خبریں
WhatsApp FaceBook
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube