ہوم   >  پاکستان

نواب امان اللہ کا قتل، مقدمے میں نامزد ملزم 4 ساتھیوں سمیت گرفتار

2 months ago

بلوچستان نیشنل پارٹی کے رہنما نوابزادہ امان اللہ زرکزئی کے قتل کے مقدمے میں نامزد ملزم 4 ساتھیوں سمیت گرفتار کرلیا گیا۔

ڈپٹی کمشنر خضدار الیاس کبزئی کے مطابق لیویز نے سنی خضدار کے علاقے میں چھاپہ مار کر بی این پی رہنماء نوابزادہ امان اللہ زرکرزئی کے قتل میں نامزد ایک ملزم کو 4 ساتھیوں سمیت گرفتار کرلیا اور انکے قبضے سے اسلحہ اور گاڑی برآمد کرلی۔

قتل کا مقدمہ امان اللہ زرکزئی کی اہلیہ کی مدعیت میں لیویز تھانہ زہری میں درج کیا گیا تھا۔ مقدمے میں قتل، اعانت جرم اور انسداد دہشتگردی کی دفعات لگائی گئی ہیں۔

نواب امان اللہ زہری کے قتل کا مقدمہ سابق وزیراعلیٰ بلوچستان کیخلاف درج

بی این پی کے مرکزی رہنماء امان اللہ زرکزئی، انکے پوتے اور دو محافظ قاتلانہ حملے میں جاں بحق ہوگئے تھے۔ انکے قتل کے مقدمے میں سابق وزیراعلی نواب ثناء اللہ زہری، انکے بھائی نعمت اللہ زہری اور دیگر نامزد ہیں۔

یاد رہے کہ امان اللہ زہری کی اپنے بھانجے سابق وزیراعلیٰ ثناء اللہ زہری سے دشمنی تھی۔ سال 2013 میں نواب ثناء اللہ نے اپنے قافلے پر ہونے والے بم حملے کا مقدمہ امان اللہ زہری اور ان کے چھ بیٹوں کے خلاف درج کرایا تھا۔ اس حملے میں ثناء اللہ زہری کے بیٹے، بھائی اور بھتیجے سمیت 4 افراد جاں بحق ہوئے تھے۔

 

آپ کے تبصرے

Your email address will not be published.

 
متعلقہ خبریں