لاہور، پولیس حراست میں ہلاک ملزم پر تشدد کی تصدیق

July 19, 2019

لاہور پولیس کی حراست میں پراسرار طور پر ہلاک ہونے والے ملزم کی پوسٹ مارٹم رپورٹ نے تشدد کی تصدیق کردی ہے۔ پولیس نے ذمہ داروں کا تعین کرنے کی بجائے معاملہ لٹکانے کی کوشش شروع کردی۔

رواں ماہ 10 تاریخ کو تھانہ اکبری پولیس نے ذیشان نامی ملزم کو بچے کے ساتھ بدفعلی کے الزام میں گرفتار کیا تھا۔ بعد ازاں حوالات میں ملزم کی پھندہ لگی لاش ملی۔

پوسٹ مارٹم رپورٹ میں متوفی کی گردن اور کولہے پہ تشدد کے نشانات پائے گئے۔ رپورٹ میں واضح کیا گیا کہ ذیشان پر تشدد ہوا ہے۔

واقعے کے بعد پولیس حکام نے موقف اختیار کیا کہ تھانے میں لگے کیمرے فعال نہیں تھے۔ اس واقعہ کے بعد 7 اہلکاروں کو معطل تو کیا گیا مگر کسی کے خلاف کوئی مقدمہ درج نہیں ہوا۔ حکام  کے مطابق معاملے کی جوڈیشل انکوائری میں سچ سامنے آجائے گا۔