ہوم   >  پاکستان

لاپتہ افراد کے خاندانوں کے دکھ کا مداوا ہونے تک مظاہرے جاری رہیں گے، آمنہ مسعود جنجوعہ

5 months ago

انسانی حقوق کی تنظیم ڈیفنس آف ہیومن رائٹس کی چیئر پرسن آمنہ مسعود جنجوعہ کہتی ہیں ڈی جی آئی ایس پی آر کیساتھ ملاقات انتہائی خوشگوار ماحول میں ہوئی، لاپتہ افراد کے خاندانوں کے دکھ کا مداوا نہ ہوا تو مظاہرے جاری رہیں گے۔

اسلام آباد میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے انسانی حقوق کی تنظیم ڈیفنس آف ہیومن رائٹس کی چیئرپرسن آمنہ مسعود جنجوعہ کا کہنا تھا کہ ڈی جی آئی ایس پی آر کو ملاقات میں اپنے مطالبات بتائے، میجر جنرل آصف غفور سے کہا کہ نائن الیون کے بعد لاپتہ  ہونیوالے افراد کے لواحقین کو سچائی سے آگاہ کیا جائے، ہم چاہتے ہیں کہ تمام کیسز منطقی انجام تک پہنچیں۔

وہ کہتی ہیں کہ آرمی چیف نے گمشدہ افراد کی تلاش کیلئے کمیٹی قائم کر رکھی ہے، ڈی جی آئی ایس پی آر سے کہا ہے کہ لاپتہ افراد کے رشتہ داروں کے دکھ کا مداوا کیا جائے، اگر ایسا نہ ہوا تو احتجاج اور مظاہرے جاری رہیں گے۔

مزید جانیے : ہرلاپتہ شخص کی گمشدگی کوریاست سے نہیں جوڑاجاسکتا، ڈی جی آئی ایس پی آر

واضح رہے کہ گزشتہ روز آمنہ مسعود جنجوعہ نے آئی ایس پی آر ہیڈ کوارٹر میں ڈی جی میجر جنرل آصف غفور سے ملاقات کی تھی جس میں لاپتہ افراد سے متعلق امور پر تبادلہ خیال ہوا۔

ڈی جی آئی ایس پی آر میجر جنرل آصف غفور کا کہنا تھا کہ ہر لاپتہ شخص کی گمشدگی کو ریاست سے نہیں جوڑا جاسکتا، کئی لاپتہ افراد افغانستان میں یا کہیں اور ٹی ٹی پی کا حصہ ہیں، ہماری ہمدردیاں لاپتہ افراد کے خاندانوں کے ساتھ ہیں، لاپتہ افراد کا معاملہ منطقی انجام تک پہنچانا چاہتے ہیں۔

 

آپ کے تبصرے

Your email address will not be published.

 
متعلقہ خبریں