سپریم کورٹ نے بل بورڈز ہٹانے سے متعلق عملدرآمد رپورٹ طلب کرلی

July 4, 2019

ملک بھرسے بل بورڈزہٹانے سے متعلق عملدرآمد کیس میں سپریم کورٹ نے میونسپل کارپوریشن اسلام آباد، خیبرپختونخوا اور کنٹونمنٹ بورڈز سے عملدرآمد رپورٹ طلب کرلی۔

بل بورڈزاتارنے سے متعلق عملدرآمدکیس کی سماعت کے دوران وکیل کنٹونمنٹ بورڈ نے سپریم کورٹ کو بتایا کہ ملک کےتمام کنٹونمنٹ بورڈز میں لگےبل بورڈزکے این اوسی ختم اور ایڈورٹائزمنٹ کمپنیوں کو نوٹسز جاری کردیے ہیں۔

وکیل ڈی ایچ اے نے عدالت کو بتایا کہ ڈی ایچ اے نے عدالتی حکم پرعملدرآمد کرتے ہوئے تمام بل بورڈز ہٹا دیے ہیں۔

اس دوران خیبرپختونخوا کی جانب سے بھی بل بورڈز ہٹانے سے متعلق رپورٹ جمع کرا دی گئی۔

جسٹس گلزارنے ریمارکس دیے کہ بل بورڈز ہٹانے کا کام کچا پکا لگتا ہے۔ بل بورڈز ہٹانے ہیں تو مکمل ہٹائیں،جو بل بورڈز کمپنیاں نہیں ہٹاتی انکو کنٹونمنٹ بورڈز ٹائیں اور نیلام کردیں۔

جسٹس عظمت سعید نت ریمارکس دیے کہ کنٹونمنٹ کہہ رہا ہے بل بورڈز ہٹانے کے لیے پیسے نہیں۔ کل کو کوئی پولیس والابھی کہے گا پیسے نہیں ملزم کیسے پکڑوں۔

عدالت نے ایم سی آئی، کے پی کے اور کنٹونمنٹ بورڈز سے عملدرآمد رپورٹ طلب کر تے ہوئے کیس کی آئندہ سماعت گرمیوں کی چھٹیوں کے بعد تک ملتوی کردی ۔