Friday, January 22, 2021  | 7 Jamadilakhir, 1442
ہوم   > Latest

کراچی میں چینی قونصل خانے پر حملے کا گرفتار مرکزی کردار پاکستان منتقل

SAMAA | - Posted: Jul 3, 2019 | Last Updated: 2 years ago
Posted: Jul 3, 2019 | Last Updated: 2 years ago

کراچي ميں چيني قونصل خانے پر حملے کا مرکزي کردار قانون نافذ کرنے والے اداروں کي گرفت ميں آگيا۔ راشد بروہي کو خليجي رياست سے گرفتاري کے بعد پاکستان منتقل کرديا گيا، راشد بروہي حملے کي نگراني کررہا تھا۔ چيني قونصل خانہ پر پچھلے سال ہونے والا ناکام حملہ بے نقاب ہوگیا۔ سيکيورٹي فورسز نے...

کراچي ميں چيني قونصل خانے پر حملے کا مرکزي کردار قانون نافذ کرنے والے اداروں کي گرفت ميں آگيا۔ راشد بروہي کو خليجي رياست سے گرفتاري کے بعد پاکستان منتقل کرديا گيا، راشد بروہي حملے کي نگراني کررہا تھا۔

چيني قونصل خانہ پر پچھلے سال ہونے والا ناکام حملہ بے نقاب ہوگیا۔ سيکيورٹي فورسز نے صرف دشمنوں کي سازش کو ناکام ہي نہيں بنايا بلکہ اس سارے منصوبے کي نگراني کرنے والے دہشت گرد کو بھي رواں برس جنوری میں پکڑ ليا۔

چائنيز قونصليٹ حملہ،سہولت کار یو اے ای سے گرفتار

خليجي رياست سے گرفتاري کے بعد کالعدم تنظيم کے دہشت گرد راشد بروہي کو پاکستان منتقل کرديا گيا۔ راشد بروہی سے اہم معلومات حاصل کی گئی ہیں۔

چینی قونصلیٹ حملہ، دہشتگردوں کے پاس اسلحہ اوربارود کہاں سے آیا؟

معلوم ہوا کہ راشد بروہي نے حملہ آوروں کو مکمل سہولیات فراہم کی تھیں، حملے سے پہلے راشد بروہی کولاکھوں روپے ديے گئے تھے، حملے کے بعد راشد بروہی بیرون ملک فرار ہوگیا تھا۔

WhatsApp FaceBook

آپ کے تبصرے :

Your email address will not be published.

متعلقہ خبریں
WhatsApp FaceBook
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube