شنگھائی تعاون تنظیم اجلاس، دیگر لیڈرز کھڑے، عمران خان بیٹھے رہے

June 14, 2019

وزیراعظم عمران خان بشکیک کے 2 روزہ دورے پر ہیں جہاں شنگھائی تعاون تنظیم اجلاس کے دوران ان کا اپنی نشست سے کھڑا نہ ہونا سوشل میڈیا پرموضوع بحث بنا ہوا ہے۔

بشکیک میں جاری شنگھائی تعاون تنظیم اجلاس میں تمام سربراہان مملکت کی آمد کے دوران سب ایک دوسرے کے استقبال کیلئے احتراما کھڑے رہے مگر اس دوران وزیراعظم عمران خان اپنی نشست پر آکر بیٹھ گئے۔

ویڈیو میں دیکھا جاسکتا ہے کہ عمران خان کا تعارف کرواتے ہوئے دوبارہ سے نام لیا گیا جس پر وہ لمحہ بھر کیلئے کھڑے ہوئے اور پھر سے بیٹھ گئے۔

ان کے بعد روسی صدر ولادیمیر پیوٹن اور دیگر کا نام پکارا گیا جن کا سبھی سربراہان مملکت نے کھڑے ہو کر استقبال کیا لیکن عمران خان بدستور اپنی نشست پر بیٹھے رہے۔

وزیراعظم کے اس عمل کو سوشل میڈیا صارفین نے پسند نہیں کیا اور اس پر اعتراضات کیے۔ بعض صارفین نے اس کو سفارتی آداب کے خلاف قرار دیا۔

مسلم لیگ ن کے رہنما احسن اقبال نے ٹویٹ بھی کیا اور طنزا عمران خان کو شاگرد قراردیتے ہوئے لکھا کہ وہ سیکھ رہے ہیں کہ وزیراعظم کیسے بنا جاتا ہے۔

بعض سوشل میڈیا صارفین نے وزیراعظم کے ساتھ جانے والے سفارت کاروں کو ذمہ دار ٹھہراتے ہوئے لکھا کہ انہیں وزیرعظم کی رہنمائی کرنی چاہیے تھی۔