فضل الرحمان روندوکھلاڑي ہے،جو وکٹيں لے کر بھاگتا ہے،وزیراعظم

April 21, 2019

وزیر اعظم عمران خان کا کہنا ہے کہ فضل الرحمان ایسا ہے جیسا بچوں کی ٹیم میں روندو کھلاڑی ہوتا ہے۔ یہ وہ کھلاڑی ہے جو آوٹ ہونے پر اپنے ساتھ ہی وکٹیں بھی لے جاتا ہے۔

کوئٹہ میں نیا پاکستان ہاؤسنگ اسکیم کا سنگ بنیاد رکھنے کی تقریب سے خطاب میں وزیر اعظم عمران خان نے کہا کہ فضل الرحمان ایسا ہے جیسا بچوں کی ٹیم میں روندو کھلاڑی ہوتا ہے، جب سے فضل الرحمان کی وکٹ گری ہے تب سے وہ انتظار کررہے ہیں کہ وہ نہیں کھیل رہے تو دوسروں کو بھی نہ کھیلنے دیں۔

 

انہوں نے کہا کہ لوگ مجھے کہتے ہیں کہ میں پرانی باتیں کرتا ہوں، یہ باتیں نہ کروں تو موازنہ کیسے ہوگا، دو جماعتوں نے ملک کے ساتھ جوکیا وہ دشمن بھی نہیں کرتا۔ کینسر نکالا جائے تو تکلیف توہوتی ہے لیکن پھر مریض ٹھیک ہوجاتا ہے۔ میں کینسر اسپتال بنانے گیا تو لوگوں نے مذاق اڑایا، نمل یونیورسٹی بنانے گیا تو تب بھی مذاق اڑایا گیا لیکن آج وہی کینسر اسپتال پاکستان کا واحد اسپتال ہے جہاں 75 فیصد مریضوں کا مفت علاج کیا جاتا ہے اور نمل یونیورسٹی کا تجربہ بھی کامیاب رہا۔

 

عمران خان نے کہا کہ زرداری اورنواز کی حکومتوں نے ملک سے جو کیا ہے وہ تو کوئی دشمن بھی ملک سے نہ کرے، اگر ایک فیکٹری پر ڈاکو کو بٹھادیں فیکٹری بند ہوجائے گی۔ اُن کا کہنا تھا کہ ملک کیسے چل سکتا ہے جب بار بار ڈاکو آکر بیٹھ جائیں۔

 

وزیراعظم کا کہنا تھا کہ چاہے جتنی بھی دیر لگ جائے ان لوگوں کو سزائیں ضرور دالوائیں گے تاکہ آئندہ کوئی الیکشن لڑکر ملک لوٹنے نہ آئے۔

 

وزیراعظم مخالفین کو آڑے ہاتھوں لیتے ہوئے کہا کہ پچھلے دس سال میں اس ملک کو جس بے دردی سے لوٹا گیا وہ اپنی حکومت کے پورے پانچ سال لوگوں کو بتاتا رہوں گا، ہمیں ہر روز نئی چیزیں مل رہی ہیں، یہ اسی لیے گھبرائے ہوئے ہیں کہ جلدی سے عمران کی حکومت گراؤ ورنہ یہ جیل چلے جائیں گے۔