گورنر شاہ فرمان کی عمران خان کو ’بے وقوف‘ بنانے کی کوشش

April 20, 2019

گزشتہ روز وزیراعظم عمران خان نے دورہ اورکزئی سے قبل پشاور میں شوکت خانم اسپتال کا دورہ کیا جہاں انہوں نے مریضوں سے بھی ملاقاتیں کیں اور ان کے تاثرات معلوم کیے۔

ان ملاقاتوں کی ایک ویڈیو سوشل میڈیا پر وائرل ہورہی ہے جس میں ایک افغان باشندہ وزیراعظم عمران خان سے بات کر رہا ہے جبکہ خیبر پختونخوا کے گورنر شاہ فرمان اس کا ترجمہ کر رہے ہیں۔

گورنر شاہ فرمان کی ترجمانی کی یہ ویڈیو سوشل میڈیا پر خوب وائرل ہوئی اور اس کی وجہ یہ ہے کہ شاہ فرمان نے افغان باشندے کی باتوں کا ترجمہ کرنے کے بجائے اپنے ’دل کی بات‘ عمران خان کو بتا دی۔

اس ویڈیو میں دیکھا جاسکتا ہے کہ بزرگ شخص وزیراعظم کو بتا رہا ہے کہ ’’وہ افغانستان کے صوبہ مزار شریف سے اپنے بیٹے کو لیکر پشاور شوکت خانم میں آیا ہے اور یہاں اس کے بیٹے کے دو آپریشن ہوئے ہیں۔ اب وہ اللہ کے فضل سے اور آپ کی برکت سے بالکل ٹھیک ہوگیا ہے۔ افغانستان میں آپ کیلئے محبت ہے، اس اسپتال میں عملہ ہم سے اچھے طریقے سے پیش آتا ہے اور پاک افغان دوستی کو مزید مضبوط کرنا چاہئے۔

لیکن دوسری جانب شاہ فرمان نے اس پوری گفتگو کو ایک جملے میں سمیٹے ہوئے عمران خان کے سامنے کچھ یوں ترجمہ کیا ’’ہم خوش قسمت ہیں کہ آپ (وزیراعظم) منتخب ہوگئے ہیں۔

اس کے بعد وہ بزرگ کچھ کہنے کی کوشش کر رہے ہیں مگر وزیراعظم کا حفاظتی عملہ ان کو کھینچ کر ایک طرف لے جاتا ہے اور وزیراعظم آگے بڑھ جاتے ہیں۔

واضح رہے کہ افغانستان سے مریضوں کی بڑی تعداد علاج کیلئے پاکستان کا رخ کرتی ہے، خاص طور پر کوئٹہ اور پشاور کے اسپتالوں میں خاطر خواہ تعداد افغان مریضوں کی ہوتی ہے۔