آئی جی پنجاب تبدیل، امجد جاوید سلیمی کی جگہ عارف نواز کو عہدہ سونپ دیا گیا

April 15, 2019

پنجاب کی بیورو کریسی میں تقرر و تبادلے کا سلسلہ تھم نہ سکا، 9 مہینے میں تیسری بار آئی جی پولیس کو تبدیل کردیا گیا، کیپٹن (ر) عارف نواز کو دوسری بار پنجاب پولیس کی سربراہی مل گئی۔

پنجاب پولیس کا سربراہ پھر تبدیل ہوگیا، امجد جاوید سلیمی کو فارغ کردیا گیا، ان کی جگہ کیپٹن (ر) عارف نواز کو نیا آئی جی پنجاب مقرر کردیا گیا۔

حکمران جماعت نے 9 ماہ میں تیسری بار آئی جی پنجاب تبدیل کیا ہے، امجد جاوید سلیمی کو عہدے سے ہٹاکر اسٹیبلشمنٹ ڈویژن رپورٹ کرنے کے احکامات جاری کئے گئے ہیں، گزشتہ روز ہونیوالے تبادلوں پر وزیراعلیٰ پنجاب کہتے ہیں جس کھلاڑی کو جہاں چاہیں تعینات کریں گے۔

پی ٹی آئی پنجاب میں برسر اقتدار آئی تو نگراں حکومت کے آئی جی کلیم امام کو تبدیل کرکے ان کی جگہ محمد طاہر کو یہ ذمہ داری سونپی گئی تھی، خاتون اول کی بیٹی کیساتھ پاکپتن پولیس کی بدسلوکی کا واقعہ سامنے آیا تو انہیں بھی عہدے سے ہاتھ دھونا پڑے۔

محمد طاہر کے بعد گورنر پنجاب چوہدری سرور کے قریبی تعلق دار امجد سلیمی کو آئی جی پنجاب لگایا گیا تھا، اب پنجاب پولیس کی پگ شہباز شریف کے آخری دور حکومت کے انسپکٹر جنرل اور موجودہ سیکریٹری نارکوٹکس کنٹرول ڈویژن عارف نواز کے سر پر رکھی گئی ہے۔ کیپٹن (ر) عارف نواز کو دوسری مرتبہ یہ ذمہ داری سونپی جارہی ہے۔