Thursday, January 20, 2022  | 16 Jamadilakhir, 1443

فیصل آباد میں پولیس والوں کی کھلی بدمعاشی، ٹھیکیدار پر تشدد اور فائرنگ

SAMAA | - Posted: Apr 8, 2019 | Last Updated: 3 years ago
SAMAA |
Posted: Apr 8, 2019 | Last Updated: 3 years ago

فیصل آباد میں برف کے کارخانے کے ٹھیکیدار پرپولیس اہلکار کا ساتھیوں سمیت تشدد اورفائرنگ ، سی سی ٹی وی فوٹيج سامنے آنے کے بعد سب انسپکٹرکے خلاف قبضے کے الزام میں مقدمہ درج کرلیا گیا۔

فيصل آباد کے آئس فيکٹري ميں کچھ لوگ آئے اور ٹھيکيدار کو مارنا شروع کرديا لیکن تشدد کرنے والے کوئي اور نہيں عوام کے محافظ پوليس اہلکار ہيں۔

سب انسپکٹر طارق نے ساتھيوں کے ساتھ ٹھيکيدار عاکف کو پيٹا گھسيٹ کر فيکٹري سے باہر لے گئے باہر بھي پوليس اہلکار تماشا ديکھتے رہے ، عاکف بھاگ کر اندر آيا تو پھر پٹائي شروع کردي مار مار کر دل نہ بھرا تو فائرنگ کردي۔

عاکف کے مطابق سب انسپکٹر طارق نے اپني فيکٹري تين سال کے ليے ٹھيکے پر دي ليکن سال بھر ميں ہي فيکٹري زبردستي خالي کرانے آگيا۔

ٹھيکيدار نے بتایا کہ مجھ پر سیدھا فائر کیا گیا مگر قتل کے ارادے کی دفعات شامل نہیں کی گئی پولیس اپنے ساتھی کےساتھ ہے۔

سي سي ٹي وي فوٹيج آنے کے بعد بھي سب انسپکٹر طارق پر قتل کي دفعات نہيں لگائي گئيں، پوليس کے مطابق ابھي تفتيش کي جاري ہے۔

ترجمان سی پی او عامر وحید کے مطابق معاملے کی مزید انکوائری کی جارہی ہے فیکٹری سب انسپکٹر کي ہی ہے۔

ٹھيکدار عاکف نے پوليس اہلکاروں کيخلاف سخت کارروائي کا مطالبہ کيا ہے۔

WhatsApp FaceBook
تازہ ترین
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube