Wednesday, January 26, 2022  | 22 Jamadilakhir, 1443

نیب کالا قانون ہے، ترمیم کی جائے، شہباز شریف کا مطالبہ

SAMAA | - Posted: Jan 2, 2019 | Last Updated: 3 years ago
Posted: Jan 2, 2019 | Last Updated: 3 years ago

شہباز شریف نے نیب کو کالا قانون قرار دے کر ترامیم کا مطالبہ کرديا، کڑی تنقید کرتے ہوئے بولے کہ قتل کیس میں ریمانڈ 14 دن کا ہوسکتا ہے تو نیب کیس میں کیوں نہیں۔ چيئرمين نيب کہتے ہيں مطالبہ بے بنياد ہے، تبصرے کرنے والے آئين جانتے ہی نہيں۔

پارلیمنٹ کی راہداریوں میں اپوزیشن لیڈر شہباز شریف نے نیب قانون پر کڑی تنقید کی، بولے کہ قتل کیس میں ریمانڈ 14 دن کا ہوسکتا ہے تو نیب کیس میں کیوں نہیں؟، نوے روز کا ریمانڈ بالکل نہیں ہونا چاہئے۔

مسلم لیگ ن کے صدر نے نیب قوانین کو کالا قانون قرار دیتے ہوئے اس میں ترمیم کا مطالبہ کردیا۔

سابق وزیراعلیٰ پنجاب شہباز شریف کو کئی معاملات میں نیب کی تحقیقات کا سامنا ہے، وہ صاف پانی اسکینڈل میں قومی احتساب بیورو کی تحویل میں ہیں، انہیں پروڈکشن آرڈر جاری ہونے پر قومی اسمبلی اجلاس کیلئے لایا جاتا ہے۔

چیئرمین نیب جسٹس (ر) جاوید اقبال نے راولپنڈی میں اس بیان کا ایک دن پیشگی ہی جواب دے دیا تھا، ان کا کہنا تھا کہ جنہیں آئین و قانون کا پتہ نہیں وہ نہ نیب قوانین پر تنقید کرتے ہیں۔

سابق وزیراعظم نواز شریف سمیت مسلم لیگ ن کے دیگر کئی رہنماؤں کو بھی نیب کی تحقیقات کا سامنا ہے، جن میں سعد رفیق اور ان کے بھائی سلمان رفیق بھی شامل ہیں۔

WhatsApp FaceBook
تازہ ترین
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube