Friday, October 30, 2020  | 12 Rabiulawal, 1442
ہوم   > Latest

پشاور میں صفائی کا عملہ ’سنگل کلک‘ کی دوری پر

SAMAA | - Posted: Jan 2, 2019 | Last Updated: 2 years ago
SAMAA |
Posted: Jan 2, 2019 | Last Updated: 2 years ago

اگر آپ پشاور میں رہائش پذیر ہیں اور اپنے گھر کے باہر کچرے کے ڈھیر سے تنگ ہیں یا گلی میں ابلتے گٹر آپ کو موڈ خراب کر رہے ہیں تو آپ کو زیادہ زحمت کرنے کی ضرورت نہیں، اپنا فون اٹھائیں اور ایک کال کریں یا پھر اسمارٹ فون ایپلی کیشن ’صفا پیخور‘ پر شکایت درج کریں، صفائی ستھرائی کا عملہ آپ کی خدمت میں حاضر ہوگا۔

واٹر اینڈ سنیٹیشن سروسز پشاور نے شہر کو صاف ستھرا رکھنے کے لیے ہیلپ لائن قائم کی ہے جبکہ اسمارٹ فون استعمال کرنے والوں کے لیے ’صفا پیخور‘ یعنی صاف پشاور کے نام سے ایک ایپ بنائی ہے جسے شہری گوگل پلے اسٹور سے ڈاونلوڈ کرکے جس وقت چاہیں شکایات درج کرا سکتے ہیں  یا ہیلپ لائن نمبر 1334 پر کال کرکے اپنے مسائل سے آگاہ کریں۔

صفا پیخور ایپلی کیشن اردو اور انگلش میں دستیاب ہے جس میں کچرے اور پینے کے پانی کی شکایات کے لیے الگ الگ سیکشن ہیں۔

واٹر اینڈ سنیٹیشن سروسز پشاور کے ترجمان حسن علی کا کہنا ہے 48 گھنٹوں کے اندر شہریوں کی شکایت کا ازالہ کیا جاتا ہے۔

یہ بھی پڑھیں: پشاور بورڈ کا شہدا کے بچوں سے امتحانی فیس نہ لینے کا فیصلہ

ایپلی کیشن استعمال کرنے والوں کو پہلی مرتبہ رجسٹریشن کے لیے اپنا نام، فون نمبر اور ای میل ایڈریس جبکہ بعد ازاں لاگ ان ہونے کے لیے پاسورڈ منتخب کرنا ہوگا۔

شکایت درج کرنے والوں کو متعلقہ مسائل سے متعلق مکمل معلومات، جگہ کا مکمل پتہ اور ممکن ہو تو تصویر بھی ایپ میں اپلوڈ کرنی ہوگی تاکہ عملہ کو متعلقہ مقام پر پہنچے میں آساںی ہو۔

واٹر اینڈ سنیٹیشن سروسز پشاور کے ترجمان کا کہنا ہے کہ ہم جی پی ایس کے ذریعے متعلقہ مقام معلوم کرتے ہیں اور کمپنی کے متعلقہ زونل آفس کے ذریعے 48 گھنٹوں کے اندر شکایت کا ازالہ کرتے ہیں جبکہ ایپلی کیشن اور ہیلپ لائن 24 گھنٹے فعال رہتی ہے۔

صفا پیخور ایپلی کیشن پر جب بھی کوئی شکایت درج کرتا ہے یا ہیلپ لائن پر کال کرتا ہے تو زونل منیجرز اور کمپنی کے سربراہ سمیت سب کے کمپیوٹرز پر نوٹیفیکیشن چلا جاتا ہے اور جب تک کمپلین کا جواب نہیں دیا جاتا تب تک نوٹیفکیشن مسلسل پاپ اپ ہوتا رہتا ہے۔

ہیلپ لائن پر کال کرنے والوں کی شکایات سننے کے لیے 3 ٹیلی فون اپریٹرز 24 گھنٹے موجود ہوتے ہیں جو شکایت کنندہ کا نام، رابطہ نمبر اور پتہ پوچھ کر سسٹم میں درج کرتے ہیں۔

ٹیلی فون آپریٹر جواد شاہ کا کہنا ہے کہ ہمیں روزانہ 25 تک شکایات موصول ہوتی ہیں جن میں زیادہ تر واٹر سپلائی پائپ لائن لیک ہونے اور گٹر بند ہونے سے متعلق ہوتی ہیں۔ ہم یہ شکایات درج کرکے متعلقہ زونل آفس کو فارورڈ کردیتے ہیں۔

واٹر اینڈ سنیٹیشن سروسز پشاور کے دائرہ کار میں پشاور کے 81 یونین کونسل آتے ہیں۔ کمپنی کو 2018 میں کچرے سے متعلق 28 ہزار 800 شکایات موصول ہوئیں جبکہ گٹروں سے متعلق 19 ہزار 927 افراد نے شکایات درج کرائیں جن میں 99 فیصد شکایات کا ازالہ کیا گیا۔

کمپنی کے ترجمان کے مطابق باقی ماندہ ایک فیصد شکایات ہماری حدود میں نہیں تھی تاہم ہم نے شکایت کنندہ کو رابطہ کرکے آگاہ کیا کہ ان کا علاقہ ہمارے دائرہ اختیار میں نہیں ہے۔ آپ متعلقہ ادارے سے رابطہ کیجئے۔

ترجمان کے مطابق شکایت کا ازالہ ہونے کے بعد کمپنی کی جانب سے شکایت کنندہ کو فون کرکے پوچھا بھی جاتا ہے کہ وہ مطمئن ہیں یا نہیں۔

WhatsApp FaceBook

آپ کے تبصرے :

Your email address will not be published.

متعلقہ خبریں
WhatsApp FaceBook
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube