Monday, August 10, 2020  | 19 Zilhaj, 1441
ہوم   > Latest

دریائے کابل کی نایاب مچھلی “شیرماہی” کی نسل معدوم ہونے لگی

SAMAA | - Posted: Nov 30, 2018 | Last Updated: 2 years ago
SAMAA |
Posted: Nov 30, 2018 | Last Updated: 2 years ago

دریائے کابل کی نایاب مچھلی “شیرماہی” ذائقے کی وجہ سے لوگوں میں بہت پسند کي جاتي ہے،مگر اس نایاب مچھلی کي نسل معدوم ہوتی جارہی ہے۔ دریائےکابل میں پائي جانيوالی نایاب مچھلی شیرماہی موسمی تبدیلی، بڑھتی ہوئی آبی آلودگی اورغیرقانونی شکار کے باعث خطرات سے دوچار ہے۔ ماہرین کا کہنا ہےاگر توجہ نہ دی گئی...

دریائے کابل کی نایاب مچھلی "شیرماہی" ذائقے کی وجہ سے لوگوں میں بہت پسند کي جاتي ہے،مگر اس نایاب مچھلی کي نسل معدوم ہوتی جارہی ہے۔

دریائےکابل میں پائي جانيوالی نایاب مچھلی شیرماہی موسمی تبدیلی، بڑھتی ہوئی آبی آلودگی اورغیرقانونی شکار کے باعث خطرات سے دوچار ہے۔

ماہرین کا کہنا ہےاگر توجہ نہ دی گئی تو ٹراؤٹ جیسی لذت والی مچھلی کی یہ نسل بہت جلد معدوم ہوجائے گی۔

دودھ کی مانند سفید شیرماہی مچھلی سردی کا توڑ ہی نہیں توانائی بخش اورذائقہ دار بھي ہے،جس کی وجہ سے شہری اسے شوق سے کھاتے ہیں۔

بارہ انچ تک لمبي اور کم کانٹوں والی یہ نایاب مچھلی دریائے کابل میں پائی جاتی ہے جس کی افزائش تالابوں میں ممکن نہیں۔

WhatsApp FaceBook

آپ کے تبصرے

Your email address will not be published.

متعلقہ خبریں
WhatsApp FaceBook
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube