ہوم   > Latest

تحریک انصاف نےنفرت کےکلچرکوفروغ ديا،خواجہ سعدرفيق

SAMAA | - Posted: Nov 26, 2018 | Last Updated: 1 year ago
SAMAA |
Posted: Nov 26, 2018 | Last Updated: 1 year ago

لاہور ہائي کورٹ نے خواجہ سعد رفيق اور ان کے بھائي سلمان رفيق کي عبوري ضمانت ميں پانچ دسمبرتک توسيع کردي۔ نيب کا تفتيشي افسر عدالت ميں گرفتاري کي وجوہات پيش نہ کرسکا ۔ سعد رفيق کا کہنا ہے کہ عمران خان احتساب کے نام پرانتقام لے رہے ہيں۔

لاہور ہائی کورٹ کے باہر میڈیا سے گفت گو میں پاکستان مسلم لیگ ن کے سینیر رہنما خواجہ سعد رفیق کا کہنا تھا کہ عمران خان کو مجھ سے بہت تکلیف ہے، عمران خان سمجھتے ہيں وہ ايک مقبول ليڈر ہيں، عمران خان میرے حلقے سے ہار گئے تھے، تاہم پی ٹی آئی والے ہار تسلیم کرنے کو تیار نہ ہوئے۔

 

انہوں نے الزام عائد کرتے ہوئے کہا کہ ن لیگ کو سیاسی انتقام کا نشانہ بنایا جا رہا ہے، تحریک انصاف نے ملک میں نفرت کے کلچر کو فروغ ديا،مگر میں مخافین کو یہ بتانا چاہتا ہوں کہ ہم جيل چلے جائيں گے لیکن دب کر نہيں رہيں گے، حکومت ملک پر قرضوں کا بوجھ ڈال رہي ہے، حکومت کی پالیسیاں عوام دوست نہیں، غربت کا یہ حال ہے کہ لوگ خود کشی پر مبجور ہوگئے ہیں۔

 

سعد رفیق نے کہا کہ نيب نے انسانوں کو پنجروں ميں بند رکھا ہوا ہے، ہمیں سیاسی انتقام کا نشانہ بنایا جارہا ہے، جو سلوک ہمارے ساتھ ہے وہ دہشت گردوں سے کے ساتھ رواں سلوک سے بھی بدتر ہے۔

 

واضح رہے کہ قبل ازیں آج ہونے والی سماعت میں لاہور ہائی کورٹ کے دو رکنی بینچ نے خواجہ سعد رفیق کی عبوری ضمانت میں 5 دسمبر تک توسیع کی۔

WhatsApp FaceBook

آپ کے تبصرے

Your email address will not be published.

متعلقہ خبریں
WhatsApp FaceBook
 
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube