لنڈی کوتل میں آندھی کے باعث بجلی کی فراہمی معطل،بحالی کا کام جاری

SAMAA | - Posted: Nov 7, 2018 | Last Updated: 3 years ago
Posted: Nov 7, 2018 | Last Updated: 3 years ago

   ضلع خیبرٹرائبل کی تحصیل لنڈی کوتل کے علاقہ خیبر ولی خیل(متہ خیل) میں چند روز قبل تیز آندھی کے باعث تباہ ہونے والے ہائی ٹرانسمیشن لائن ٹاورز پر واپڈا اہلکاروں اور الخدمت کے رضاکاروں نے مرمت کا کام شروع کردیا، دونوں ٹاورز کو مرمت کرکے گرڈ اسٹیشن کو بجلی بحالی پانچ روز میں متوقع ہے ۔ بجلی کی عدم فراہمی سے علاقے کی ایک تہائی آبادی مشکل کا شکار ہے۔

لنڈی کوتل میں تباہ ہونے والے ہائی ٹینشن لائن کے ایک ٹاور پر  فیصل آباد سے آنے والی واپڈا کی ٹیم نے الخدمت رضاکاروں کے ہمراہ مرمتی کام کا آغاز کردیاہے۔

پہلے چھوٹے ٹاور پر قریباَ 70فیصد کام مکمل کرلیا گیا ہے۔ آج دوسرے ٹاور پر مرمتی کام کا آغاز کیا جائے گا جبکہ ہائی ٹینشن تاروں کے بچھانے کا عمل بھی اگلے پانچ روز میں مکمل کرنے کی توقع ہے۔

وفاقی وزیر مذہبی امور و بین المذاہب ہم آہنگی علامہ محمدنورالحق قادری نے ٹاورز گرنے کا نوٹس لے کر واپڈا کے اعلیٰ حکام سے فوری طورپر مرمتی کام شروع کرنے کیلئے رابطہ کیا تھا جس کے بعد واپڈاحکام نے خصوصی ٹیم بھجوادی ہے۔

لنڈی کوتل گرڈ اسٹیشن کی بجلی بندش سے علاقہ مکینوں کے معمولات زندگی مفلوج ہیں اور لوگوں کیلئے پینے کے پانی کا حصول بھی مشکل ہوگیا ہے کیونکہ 15سے زائد ٹیوب ویلز بجلی نہ ہونے کی وجہ سے بند پڑے ہیں اور علاقہ مکین دوردراز کے چشموں سے برتنوں میں سروں پر پانی لانے پر مجبور ہیں۔ علاقہ مکینوں کا مطالبہ ہے کہ ٹاورز کی مرمت اور گرڈاسٹیشن کو بجلی کی بحالی ہنگامی بنیادوں پر کی جائے تاکہ عوام کی مشکلات میں کمی آسکے۔

واضح رہے کہ جمعہ اور ہفتہ کی درمیانی شب لنڈی کوتل میں ولی خیل متہ خیل کے مقام پر تیزآندھی کے باعث پشاور سے لنڈی کوتل گرڈاسٹیشن کو پشاورسے منسلک کرنے والی ہائی ٹرانسمیشن لائن کے دو بڑے ٹاورز گرگئے تھے جس کے بعد پورے لنڈی کوتل سب ڈویژن کیلئے بجلی کی ترسیل مکمل طور پر بند ہے۔

WhatsApp FaceBook

آپ کے تبصرے :

Your email address will not be published.

متعلقہ خبریں
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube