Monday, January 24, 2022  | 20 Jamadilakhir, 1443

لاہور میں تجاوزات کے خلاف آپریشن، ہزاروں کنال اراضی واگزارکروائی جائےگی

SAMAA | - Posted: Oct 2, 2018 | Last Updated: 3 years ago
SAMAA |
Posted: Oct 2, 2018 | Last Updated: 3 years ago

 

لاہورکے مختلف بازاروں ميں بھي تجاوزات ہٹانے کا کام شروع کرديا گيا ہے۔ آپریشن میں سرکار کی 31687 کنال اراضی کو واگزار کروایا جائے گا۔

لاہورکے بازاروں ميں قائم تجاوزات ہٹانے کا آپريشن شروع کردیاگیاہے۔ پہلے مرحلےمیں انارکلي بازارميں دکانوں کے باہرلگے شيڈز ہٹادئيے گئے۔ اس دوران تجاوزات ہٹانے پرچندايک تاجروں کي عملے سے تکراربھی ہوئی۔اس آپریشن سے 15 روز قبل تاجروں کو خبردار کیاگیاتھا کہ تجاوزات کوخود سے ختم کردیں مگر اخبارات میں اشتہارات کےباوجود تجاوزات ختم نہ ہوسکیں۔

اس آپریشن کی ڈی سی لاہور کیپٹن (ر) انوارالحق نگرانی کررہے ہیں۔ آپریشن میں سرکار کی 31687 کنال اراضی کو واگزار کروایا جائے گا۔محکمہ جنگلات کی 35 ایکڑ اراضی کو بھی واگزار کروایا جائے گاجس پر50 ہزار پودے لگائے جائیں گے۔

والڈ سٹی اتھارٹی کے کروڑوں روپے کی مالیت کے آٹھ پلاٹوں کو قبضہ مافیا سے بھی چھڑوایا جائے گا جبکہ ایل ڈی اے کی 636 کنال اراضی کوواگزار کروایا جائے گا۔ ایم سی ایل کی 2 ارب روپے مالیت کے 32 پلاٹوں کو واگزار کروایا جائے گا۔

اس آپریشن کے دوران لاہور شہر کے بازاروں میں کی گئی عارضی وپختہ تجاوزات کو بھی ہٹایا جائے گا۔ایل ڈی اے ، ایم سی ایل اور والڈ سٹی نے شہریوں کو نوٹس کے ذریعے اطلاع دے دی ہے۔ تجاوزات و قبضہ کی ہوئی جگہوں پر محکموں کی طرف سے نشانات لگا دیئے گئے ہیں۔ضلعی سطح پر مستقل انسدادِ تجاوزات سیل قائم کر دیا گیا ہے۔ اس آپریشن میں ڈی سی لاہور، ڈی جی آئی آپریشنز، ایل ڈی اے اور ایم سی ایل تجاوزات مہم  کے اہم ممبرز ہوں گے۔ واگزار کروائی جانے والی اراضی کو دوبارہ قبضہ مافیا سے بچانے کیلئے بہتر استعمال کا بھی منصوبہ بنا لیا گیاہے۔عدالتی کیسوں کے حوالے سے مربوط لیگل سپورٹ کی فراہمی کا بھی فیصلہ کیا گیا ہے۔

آج  سے شروع ہونے والی انسدادِ تجاوزات مہم میں بھاری مشینری کا استعمال کیا جارہاہے۔اس کے علاوہ تجاوزات ہٹانے کے لئے دو ٹیمیں بنائی گئی ہیں۔ ٹیم نمبر 1ایل ڈی اے اور ایم سی ایل پر مشتمل ہے جس میں 40 ملازمین، 20 ٹرک اور دو لوڈرز شامل ہیں۔

ٹیم نمبر 2 میں ایم سی ایل اور والڈ سٹی شامل ہیں۔ ٹیم میں 40 ملازمین اور بھاری مشینری شامل ہیں۔ ڈی سی لاہور نے مزید اضافی مشینری کا بھی بندوبست کرنے کی ہدایت کی ہے۔ ریسکیو 1122 کی ایمبولینس اور فائر بریگیڈ کی گاڑی بھی تجاوزات ہٹانے والی ٹیم کے ہمراہ ہوگی۔ آپریشن کی نوعیت کے حساب سے پولیس کی نفری بھی ٹیم کے ہمراہ موجود ہے۔

WhatsApp FaceBook
تازہ ترین
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube