Tuesday, November 24, 2020  | 7 Rabiulakhir, 1442
ہوم   > پاکستان

کوئٹہ: مبینہ افغان شہری ایم پی اے احمد علی کوہزاد قتل کیس میں گرفتار

SAMAA | - Posted: Sep 26, 2018 | Last Updated: 2 years ago
SAMAA |
Posted: Sep 26, 2018 | Last Updated: 2 years ago

ہزارہ برادری سے تعلق رکھنے والے بلوچستان اسمبلی کے رکن اور مبینہ افغان شہری احمد علی کوہزاد کو کوئٹہ پولیس نے قتل کیس میں احاطہ عدالرت سے گرفتار کرلیا ہے۔

یاد رہے کہ رواں سال 23 جنوری کو کوئٹہ کے علاقے مری آباد میں ایک خالی پلاٹ سے لاپتہ جیولر محمد حفیظ کی لاش ملی تھی۔ بعد میں معلوم ہوا کہ مذکورہ خالی پلاٹ احمد علی کوہزاد کی ملکیت ہے۔

مقتول جیولر محمد حفیظ کے ورثاء نے احمد علی کوہزاد سمیت5 پانچ افراد کے خلاف مقدمہ درج کرایا اور مقدمہ کی تفتیش سی آئی اے پولیس کو سونپی گئی۔ پولیس نے مقدمہ میں نامزد دیگر تین ملزمان کو گرفتار کرلیا جبکہ احمد علی کوہزاد اور پانچواں ملزم مفرور تھا جس پر عدالت نے ان کے وارنٹ گرفتاری کردیے تاہم تاہم احمد علی کوہزاد نے گرفتاری سے بچنے کیلئے عدالت میں ضمانت کی درخواست دائر کی تھی۔

 کوئٹہ کے ایڈیشنل ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن جج اسداللہ کاکڑ نے بدھ 26 ستمبر کو ملزم کی درخواست ضمانت پر فیصلہ سناتے ہوئے ان کی درخواست مسترد کردی جس کے بعد پولیس نے احمد علی کوہزاد کو احاطہ عدالت سے گرفتار کر لیا۔

واضح رہے کہ احمد علی کوہزاد کو پاکستانی شہریت سے متعلق بھی مقدمے کا بھی سامنا ہے جس کے باعث ان کی الیکشن میں کامیابی کا نوٹی فکیشن بھی روک دیا گیا ہے۔

احمد علی کوہزاد پر الزام ہے کہ وہ افغان شہری ہیں اور جعلسازی کے ذریعے پاکستانی شناختی کارڈ حاصل کیا تاہم بعد میں نادرا نے تصدیق کے دوران ان کا شناختی کارڈ بلاک کردیا۔

اس دوران عام انتخابات کا مرحلہ آیا تو احمد علی کوہزاد نے بلاک شدہ شناختی کارڈ پر انتخابات میں حصہ لیا اور کامیابی حاصل کرکے بلوچستان اسمبلی کے رکن منتخب ہوگئے۔ انتخابی نتائج سامنے آنے کے بعد ان کی شہریت کا معاملہ سامنے آیا جس پر الیکشن کمیشن نے ان کی کامیابی کا نوٹی فکیشن روک دیا۔ ان کی شہریت سے متعلق مقدمہ تاحال عدالت میں زیر سماعت ہے۔

WhatsApp FaceBook

آپ کے تبصرے :

Your email address will not be published.

متعلقہ خبریں
WhatsApp FaceBook
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube