ہوم   >  پاکستان

مردان کے 8 فلٹریشن پلانٹ ناکارہ، عوام آلودہ پانی پینے لگے

1 year ago

مردان ميں کروڑوں روپے کي لاگت سے 8 واٹر فلٹريشن پلانٹس تو لگائے گئے لیکن شہری پھر بھی مضر صحت پاني پينے پرمجبورہيں۔ مردان سے سماء کے نمائندہ شہاب اکبر کے مطابق ضلعي انتظاميہ کي غفلت کے باعث کروڑوں روپے کي لاگت سے لگنے والے آٹھ واٹرفلٹريشن پلانٹس چارسال ميں ناکارہ ہوگئے ہیں۔ فلٹریشن پلانٹ...

مردان ميں کروڑوں روپے کي لاگت سے 8 واٹر فلٹريشن پلانٹس تو لگائے گئے لیکن شہری پھر بھی مضر صحت پاني پينے پرمجبورہيں۔

مردان سے سماء کے نمائندہ شہاب اکبر کے مطابق ضلعي انتظاميہ کي غفلت کے باعث کروڑوں روپے کي لاگت سے لگنے والے آٹھ واٹرفلٹريشن پلانٹس چارسال ميں ناکارہ ہوگئے ہیں۔

فلٹریشن پلانٹ کي تنصیب کے بعد لوگوں صاف پانی میسرہوگیا تھا مگرپلانٹ کی بندش کے بعد شہری دوبارہ مضرصحت پانی پینے پر مجبور ہیں۔

وفاقي حکومت نے پلانٹس تو لگاديئے مگر مینٹیننس کی ذمہ داري نہیں اٹھائی جبکہ ضلعي انتظاميہ تو بات کرنے کو ہی تيار نہيں۔

عوام کي مشکلات کو ديکھتے ہوئے نجي کمپني نے پلانٹس چلانے کيلئے درخواست جمع کرائي مگرانتظاميہ نےاسے بھي کوئی جواب نہیں دیا۔

دوسری جانب ڈاکٹرز کے مطابق گندے پاني کے استعمال سے لوگ ہيپاٹائٹس جيسے موذي مرض ميں مبتلا ہورہےہيں۔ شہريوں کا مطالبہ ہے کہ صوبائي حکومت  صاف پاني کي فراہمي کو يقيني بنائے۔

 

آپ کے تبصرے

Your email address will not be published.

 
متعلقہ خبریں