جاتی امراء : بیگم کلثوم نواز، میاں شریف کے پہلو میں سپرد خاک

September 14, 2018

سابق خاتون اول بیگم کلثوم نواز کی نماز جنازہ شریف میڈیکل سٹی میں ادا کردی گئی، مولانا طارق جمیل نے نماز جنازہ کی امامت کی اور مرحومہ کیلئے دعا کرائی، سابق وزیراعظم نواز شریف، شہباز شریف، سابق صدر ممنون، اسپیکر قومی اسمبلی، گورنر پنجاب سمیت دیگر سیاستدان اور مذہبی رہنماؤں نے بھی شرکت کی۔ بیگم کلثوم نواز کو میاں محمد شریف کے پہلو میں سپرد خاک کردیا گیا۔

سابق وزیراعظم نواز شریف کی اہلیہ بیگم کلثوم نواز کی نماز جنازہ شریف میڈیکل سٹی میں ادا کی گئی، مولانا طارق جمیل نے نماز جنازہ کی ادائیگی کے بعد دعا کرائی، سابق وزیراعظم نواز شریف، شہباز شریف، سیاسی و مذہبی رہنماء، سماجی و کاروباری شخصیات، عزیز و اقارب سمیت مسلم لیگ ن کے ہزاروں کارکنوں نے بھی شرکت کی۔

بیگم کلثوم نواز کا جسد خاکی جاتی امراء سے ایمبولینس کے ذریعے جنازہ گاہ پہنچایا گیا، نماز جنازہ کے بعد شریف میڈیکل سٹی میں خاندانی قبرستان میں میاں شریف کے پہلو میں سپرد خاک کردیا گیا۔

نماز جنازہ کیلئے ہزاروں افراد کی موجودگی کے باعث کچھ بدنظمی بھی دیکھنے میں آئی، اس موقع پر علاقے میں سیکیورٹی کے سخت ترین انتظامات کئے گئے تھے۔

مزید پڑھیں : جمہوریت کی خدمت پر کلثوم نواز کا نام ہمیشہ زندہ رہے گا، جاوید ہاشمی

بیگم کلثوم نواز 11 ستمبر کو طویل علالت کے بعد لندن میں انتقال کر گئی تھیں، لندن کی ریجنٹ پارک مسجد میں ان کی نماز جنازہ ادا کی گئی تھی، جس میں مرحومہ کے بیٹے حسن اور حسین نواز، اسحاق ڈار، چوہدری نثار سمیت دیگر اہم شخصیات اور عزیز و اقارب نے شرکت کی تھی۔

ویڈیو دیکھیں : کلثوم نواز کی استقامت پر فاروق ستار کا تبصرہ

ویڈیو دیکھیں : کلثوم نواز کے انتقال کا دکھ لفظوں میں بیان کرنا مشکل

ویڈیو دیکھیں : میاں صاحب بڑے مشیر سے محروم ہوگئے، مشاہد حسین

حسن اور حسین نواز پاکستان میں مقدمات کے باعث اپنی والدہ کی تدفین میں شرکت کیلئے وطن واپس نہیں آئے جبکہ اسحاق ڈار کے بھی آمدن سے زائد اثاثوں کے کیس میں وارنٹ گرفتاری جاری ہونے پر پاکستان نہیں آئے۔

سابق وزیراعظم نواز شریف، ان کی صاحبزای مریم نواز اور داماد کیپٹن (ر) صفدر کو ایون فیلڈ ریفرنس میں احتساب عدالت سے بالترتیب 10، 8 اور ایک سال کی سزا سنائی گئی تھی جس کے بعد انہیں گرفتار کرکے اڈیالہ جیل بھیج دیا گیا تھا، تینوں افراد پرول پر رہا ہیں۔