نوازشريف، مريم اور صفدر کی پرول پر رہائی ميں تین دن کی توسيع

September 12, 2018

صوبائی وزیر اطلاعات فیاض الحسن چوہان نے کہا ہے کہ نوازشریف، مریم اور کیپٹن ریٹائرڈ صفدر کلثوم نواز کی نمازجنازہ تک پرول پر رہیں گے۔

صوبائی وزیر اطلاعات فیاض الحسن چوہان نے کہا ہے کہ قواعد کے تحت ہوم سیکرٹری ملزمان کو صرف بارہ گھنٹے تک رہائی دے سکتا ہے لیکن حکومت نے کلثوم نوازکی کی نمازجنازہ تک تینوں ملزمان کی پرول پررہائی کا اصولی فیصلہ کیا ہے ۔

وزیراطلاعات پنجاب کا کہنا ہے وہ اور پی ٹی آئی کے دیگر رہنما نماز جنازہ میں شریک ہوں گے، قانون کے مطابق کوئی بھی ملزم خونی رشتوں کی خوشی و غمی میں جا سکتا ہے۔

دوسری جانب سماء کے پروگرام آواز میں گفتگو کرتے ہوئے وزیراطلاعات پنجاب فیاض الحسن چوہان نے کہا ہے کہ عام قیدیوں کو بھی پرول پر رہا کیا جاتا ہے، 12 گھنٹے سے زائدرہائی کی منظوری کابینہ دیتی ہے, ہوم سیکریٹری نے پرول پررہائی کا فیصلہ کیا، پرول کاوقت ختم ہونے سے قبل اس میں اضافہ کیا جاسکتا ہے۔

فیاض الحسن چوہان نے کہا کہ دکھ کی اس گھڑی میں شریف برادران کے ساتھ ہیں، وزیراعظم کی ہدایت پر متاثرہ خاندان کوقانون کے مطابق سہولیات دیں۔

ڈی پی اوپاکپتن کے حوالے سے انہوں نے کہا کہ آئی جی پنجاب نے لکھ کردیا ڈی پی او کو معافی مانگنے کا نہیں کہا گیا،آئی جی پنجاب نے عدالت کو بتایا ان پر کوئی دباؤ نہیں تھا، ڈی پی اوپاکپتن کامعاملہ کلیئرہوچکاہے، رضوان گوندل کاتبادلہ محکمہ جاتی کارروائی پر کیا گیا۔

صوبائی وزیر اطلات نے کہا کہ شہبازشریف نے20سے 25محکمے اپنے پاس رکھے ہوئے تھے، شہبازشریف پنجاب کو اربوں کھربوں کامقروض کرکےگئے، ماضی میں ایک وزیر8،8گاڑیاں لے کر چلتا تھا۔