اسلام آباد اور راولپنڈی میں طوفانی بارش، کئی علاقوں میں بجلی بند

August 7, 2018

اسلام آباد اور راولپنڈی میں تین گھنٹے کی ریکارڈ توڑ بارش سے جڑواں شہروں میں سڑکیں اور گلیاں تالاب بن گئیں، جبکہ نالہ لئی سمیت برساتی نالے بپھر گئے۔


شدید بارش کے باعث جڑواں شہروں کے نشیبی علاقے زیر آب آگئے جبکہ مختلف علاقوں میں پانی گھروں میں داخل ہوگیا۔ نالہ لئی میں پانی کی سطح 13 فٹ تک بلند ہوگئی۔ کسی بھی ہنگامی صورتحال سے نمٹنے کے لیے ضلعی انتظامیہ متحرک ہے۔

جڑواں شہروں میں طوفانی بارش سے آئیسکو کے ترپن فیڈر بھی ٹرپ کرگئے، کئی علاقوں میں بحلی اب بھی بند ہے۔ راول ٹاؤن، سیٹلائٹ ٹاؤن، صدر، کینٹ، صادق آباد، غوری ٹاؤن اور اسلام آباد کے سیکٹر جی 8 سمیت کئی علاقوں میں بجلی بند ہے۔ آئیسکو حکام کے مطابق بارش تھمنے کے بعد بجلی کی بحالی کا کام شروع کردیا گیا۔

اس کے علاوہ گجرات اور جہلم میں بھی رات بھر بارش کا سلسلہ جاری رہا جس کے باعث دونوں شہروں میں ٹھنڈی ہوائیں چلنے سے گرمی کا زور ٹوٹ گیا۔ ملک کے مختلف شہروں کی طرح ملکہ کوہسار میں بھی گرج چمک کے ساتھ بارش برسنے سے مری کا موسم دلکش ہوگیا۔

مظفرآباد میں شاہراہ نیلم پر لینڈ سلائیڈنگ ہونے سے ڈونگاکس کے مقام پر شاہراہ ٹریفک کیلئے بند ہوگئی جس کے بعد وادی نیلم کا زمینی رابطہ مظفرآباد سے کٹ گیا۔

محکمہ موسمیات کے مطابق مون سون کا تازہ اسپل شروع ہونے پر ہی اسلام آباد میں 170 ملی میٹر، راولپنڈی میں 206، مری میں 97، اور جہلم میں 60 ملی میٹر بارش ہوچکی۔ آزاد کشمیر میں بھی جل تھل ایک ہے جبکہ بارشوں کا یہ سلسلہ پورا ہفتہ جاری رہنے کی پیشگوئی بھی کی گئی ہے۔