بلوچستان عوامی پارٹی نے انتخابی منشور کا اعلان کر دیا

SAMAA | - Posted: Jul 18, 2018 | Last Updated: 3 years ago
SAMAA |
Posted: Jul 18, 2018 | Last Updated: 3 years ago

گڈ گورننس ، صحت اور مالی نظم وضبط کا قیام پہلی تین ترجیحات ہیں ۔ بی اے پی کے مرکزی صدر جام کمال خان کا کہنا ہے طرز حکمرانی اور معاشی ترقی کے اہداف کے حصول کیلئے شفاف اور بلاامتیاز احتساب کا طریقہ کا ر اپنا یا جائے گا۔

کوئٹہ میں بی اے پی کے دیگر رہنماؤں کے ہمراہ پریس کانفرنس میں منشور کا اعلان کرتے ہوئے جام کمال خان کا کہنا تھا کہ حادثات کی صورت میں متاثرہ افراد کیلئے عوامی امتیازی کارڈ متعارف کرایا جائے گا جس کے تحت متاثرہ متاثرہ خاندانوں کو مفت علاج کے ساتھ ساتھ مفت تعلیم اور سستا راشن فراہم کیا جائے گا جبکہ ہیلتھ انشورنس کا رڈ سکیم متعارف کروائی جائے گی جس کی بدولت لوگ رعایتی فیس اداکر کے بنیادی طبی سہولیات حاصل کر سکیں گے ، ان کا کہنا تھا انتظامی اداروں کو ڈویژن کی سطح پر مضبوط اور موثر بنایا جائے گا طرز حکمرانی کی بہتری کیلئے اقدامات کئے جائیں گے۔

 بنیادی ڈھانچوں کےقیام،معدنی دریافت،ٹیکنالوجی فنڈقائم کیا جائے گا بلوچستان بینک کا قیام ،اور چھوٹی بڑی صنعتوں کیلئے مواقع پیدا کئے جائیں گے ۔ ان کا کہنا تھا کہ شعبہ تعلیم کی بہتری کے منصوبے شروع کئے جائیں گے نجی اداروں کے تعاون سے سرکاری یونیورسٹیاں قائم کی جائیں گی ضلع کی سطح پر طبی سہولیات کی فراہمی کیلئے بنیادی ڈھانچے کو فعال کیا جائے  گا۔ جام کمال خان کا مزید کہنا تھا کہ صوبے میں پانی اورخوراک کی کمی دور کرنے کیلئے قانون سازی کی جائے گی سرکاری ملازمتوں میں خواتین کاحصہ بڑھانے کیلئے اقدامات کئے جائیں گے  اورخواتین کیلئے فنی تربیتی مراکز میں اضافہ کیا جائے گا چھوٹے اوردرمیانے درجے کے کاروبارگھریلوصنعتوں کوفروغ دیا جائےگا ساتھ ہی ساتھ اقلیتوں اور نوجوانوں کی ترقی کے پروگرام شروع کئے جائیں گے جبکہ کوئٹہ میں پانی کی قلت دور کر نے ، ٹریفک ، صفائی اور ٹرانسپورٹ کے مسائل حل کرنے کیلئے خصوصی اقدامات کئے جائیں

WhatsApp FaceBook

آپ کے تبصرے :

Your email address will not be published.

متعلقہ خبریں
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube