Sunday, October 24, 2021  | 17 Rabiulawal, 1443

کارکنوں کی گرفتاریاں، ن لیگی رہنماؤں کے جذباتی اور دھمکی آمیز بیانات

SAMAA | - Posted: Jul 12, 2018 | Last Updated: 3 years ago
SAMAA |
Posted: Jul 12, 2018 | Last Updated: 3 years ago

کارکنوں کی گرفتاريوں پر ن ليگی رہنماء جذباتی بيان داغنے لگے، ايازصادق نے نگراں حکومت کو وارننگ دی تو رانا مشہود لانگ مارچ کی دھمکی لئے سامنے آگئے۔ اگر نواز شريف کی سواری کہيں اور اتاری تو لانگ مارچ ہوگا، سابق صوبائی وزير رانا مشہود نے سيدھی سيدھی دھمکی دیدی۔ کہتے ہیں کہ میاں صاحب...

کارکنوں کی گرفتاريوں پر ن ليگی رہنماء جذباتی بيان داغنے لگے، ايازصادق نے نگراں حکومت کو وارننگ دی تو رانا مشہود لانگ مارچ کی دھمکی لئے سامنے آگئے۔

اگر نواز شريف کی سواری کہيں اور اتاری تو لانگ مارچ ہوگا، سابق صوبائی وزير رانا مشہود نے سيدھی سيدھی دھمکی دیدی۔ کہتے ہیں کہ میاں صاحب کو جیل لے جایا گیا تو پاکستانی قوم تاریخی لانگ مارچ کرے گی۔

سابق اسپيکر قومی اسمبلی اياز صادق نے نگراں حکومت کو وارننگ دیتے ہوئے کہا کہ مجھے بھی گرفتار کرو ورنہ سارے کارکنوں کو چھوڑو۔

ن ليگی رہنماء بلال ياسين کارکنوں کی گرفتاری پر آگ بگولہ دکھائی دیئے، بولے کہ جو ہورہا ہے يہ نہيں چلے گا، ہم ڈرنے یا گھبرانے والے نہیں۔

سابق وزیراعظم نواز شریف کو احتساب عدالت نے ایون فیلڈ ریفرنس کی میں 10 سال، مریم نواز کو 7 سال اور کیپٹن (ر) صفدر کو ایک سال قید کی سزا سنائی ہے، مسلم لیگ ن کے قائد نے بیٹی کے ہمراہ جمعہ 13 جولائی کو وطن واپسی کا اعلان کیا ہے، وہ آج رات لندن سے روانہ دبئی کیلئے روانہ ہوں گئے جہاں سے کل شام 6 بجے لاہور پہنچیں گے۔

کیپٹن (ر) صفدر کو اتوار کے روز گرفتار کرلیا گیا تھا، انہیں اڈیالہ جیل منتقل کیا جاچکا ہے جبکہ نواز شریف اور مریم نواز کی بھی پاکستان آمد پر فوری گرفتاری کا امکان ہے، دونوں کو اڈیالہ جیل بھیجا جاسکتا ہے۔

WhatsApp FaceBook
تازہ ترین
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube