کیپٹن محمد صفدر کا آج ہی گرفتاری دینے کا اعلان

July 8, 2018

نا اہل وزیراعظم نواز شریف کے داماد کیپٹن ریٹائرڈ محمد صفدر نے اتوار کے روز باضابطہ گرفتاری دینے کا اعلان کردیا۔ آڈیو پیغام میں محمد صفدر نے جگہ کا تعین نہیں کیا کہ وہ کہاں سے گرفتاری دیں گے۔

نیب حکام کی جانب سے چھاپوں اور محمد صفدر کی گرفتاری کیلئے نگرانی کے بعد کیپٹن ریٹائرڈ محمد صفدر کا آڈیو پیغام منظر عام پر آگیا۔ آڈیو پیغام میں محمد صفدر کا کہنا ہے کہ انشااللہ پاکستان مسلم لیگ پورے ہزارہ صوبے میں کلین سوئپ کرے گی، 25جولائی کو ووٹ کے ذریعے بدلہ لیں۔

نوازشریف کو10،مریم کو7سال سزا،فلیٹس ضبط کرنیکا حکم

انہوں نے ہزارہ عوام سے اپیل کرتے ہوئے کہا ہے کہ سردار محمد یوسف کی قیادت میں عوام پاکستان مسلم لیگ کے امیدواروں کو ووٹ دیں، میں مسلم لیگ ن کا ادنیٰ کارکن ہوں، ن لیگ کیلئے ہی ووٹ مانگوں گا۔

کیپٹن ریٹائرڈ صفدر کا نام بلیک لسٹ میں شامل

اپنے آڈیو پیغام میں محمد صفدر کا کہنا تھا کہ پارٹی قیادت نے جہاں سے فیصلہ کیا ہے، وہیں سے گرفتاری دینے جا رہا ہوں، گرفتاری دینا بہت غیرت کا تقاضا ہے، پارٹی فیصلے کے مطابق مانسہرہ سے گرفتاری نہیں دونگا۔

ٹرانسپرنسی انٹرنیشنل کا بھی نوازشریف کیخلاف تحقیقات کامطالبہ

واضح رہے کہ اس سے قبل اتوار کی صبح نیب اہل کاروں کی ٹیم ایبٹ آباد، مانسہرہ اور ہری پور میں واقع محمد صفدر کی رہائش گاہ پہنچی تھی، تاہم انہیں کوئی کامیابی نہ مل سکی۔

نیب حکام کا کہنا تھا کہ محمد صفدر گزشتہ روز سے غائب ہیں، جس کے بعد ایبٹ آباد، مانسہرہ اور ہری پور میں ان کے گھروں کی نگرانی شروع کردی گئی ہے۔ محمد صفدر کی گرفتاری کیلئے خیبر پختونخوا پولیس اور انتظامیہ بھرپور تعاون کر رہے ہیں۔ محمد صفدر کو اتوار کے روز قانون کے مطابق گرفتار کیا جائے گا۔

نیب افسران کے مطابق محمد صفدر کا موبائل فون بند ہے، جب کہ ان کی گرفتاری کیلئے ٹیموں کی جانب سے چھاپے مارے جا رہے ہیں، تاہم گرفتاری پولیس کے تعاون سے کی جائے گی۔ ہفتہ 7  جولائی کو نا اہل وزیراعظم نواز شریف کے داماد کا نام بلیک لسٹ میں شامل کیا گیا تھا۔ حکام کے مطابق محمد صفدر کا بام بلیک لسٹ میں شامل کرنے کا مقصد ان کو بیرون ملک فرار ہونے سے روکنا ہے۔

یہاں یہ بات بھی قابل ذکر ہے کہ جمعہ چھ جولائی کو ایون فیلڈ ریفرنس کیس میں نواز شریف کی صحبزادی مریم نواز کے شوہر کیپٹن محمد صفدر کو ایک سال قید با مشقت کی سزا سنائی گئی ہے۔

ڈپٹی پراسیکیوٹر نیب سردار مظفر کے مطابق محمد صفدر کو بطور گواہ ٹرسٹ ڈیڈ پر دستخط کرنے اور جرم میں معاونت کرنے پر ایک سال قید بامشقت کی سزا سنائی گئی ہے۔ الیکشن کمیشن آف پاکستان کی جانب سے سزا کے بعد محمد صفدر کو عام انتخابات 2018 کیلئے نا اہل قرار دیا گیا ہے، محمد صفدر این اے 14 مانسہرہ سے ن لیگ کے ٹکٹ پر امیدوار کھڑے ہوئے تھے۔