مزید اقامے، کتوں کے حملے، مذہبی املاک پر قبضہ

June 13, 2018

مزید دو پارلیمنٹیرینز کے اقامے منظر عام پر آگئے

سندھ ایکسپریس، حیدر آباد

سندھ کے مزید 2 سیاستدانوں کے اقامے (عرب ممالک میں ورک پرمٹ) میر پور خاص کے حلقہ 219 میں نامزدگی فارمز کی جانچ پڑتال کے دوران منظر عام پر آئے۔

سابق صدر آصف زرداری کے بہنوئی سابق رکن قومی اسمبلی میر منور تالپور بھی خلیجی ممالک کا ورک پرمٹ (اقامہ) رکھتے ہیں، این اے 219 سے پیپلزپارٹی کے امیدوار منور تالپور کے کاغذات نامزدگی منظور کرلئے گئے۔

این اے 219 میرپور خاص سے پیپلزپارٹی کے سابق رکن صوبائی اسمبلی سید علی نواز شاہ نے بھی دبئی کا اقامہ رکھنے کا اعتراف کیا ہے، ان کے کاغذات نامزدگی کا فیصلہ مزید جانچ پڑتال کے بعد کیا جائے گا، وہ آزاد حیثیت سے الیکشن لڑنا چاہتے ہیں۔

 پانی کی قلت اور کالا باغ ڈیم کیخلاف احتجاج

روزنامہ کاوش، حیدرآباد

سندھ ہاری کمیٹی کی اپیل پر صوبہ بھر کے مختلف شہروں میں زرعی و پینے کے پانی کی قلت اور متنازع کالا باغ ڈیم کیخلاف احتجاج کیا گیا، ڈوکری، خیرپور، سامارو، کوٹ غلام محمد اور اسلام کوٹ میں مظاہرے کئے گئے۔

 کتوں کے کاٹنے کی دوا کی عدم دستیابی پر بچہ جاں بحق

روزنامہ عبرت، حیدر آباد

ضلع کشمور کے علاقے تنگوانی ٹاؤن کے نواحی گاؤں میں 10 سالہ بچے کتے نے کاٹ لیا، انسداد ریبیز ویکسین کی عدم دستیابی کے باعث بچہ جاں بحق ہوگیا، لڑکے کو تقریباً ایک ماہ قبل کتے نے کاٹا تھا، متعدد شہروں کے سرکاری اسپتالوں میں کتے کے کاٹنے کی ویکسین دستیاب نہیں ہے۔

ضلع سانگھڑ کے علاقے کھپرو میں کتے کے کاٹنے سے متاثرہ بچے کو طبی امداد کی عدم فراہمی پر تعلقہ اسپتال کے باہر شہریوں نے احتجاج کیا۔ ایم ایس کا کہنا تھا کہ کئی بار درخواست کے باوجود محکمہ صحت کے حکام کی جانب سے اینٹی ریبیز ویکسین مہیا نہیں کی گئیں۔

 پانی کی قلت سے فصلیں متاثر

روزنامہ عبرت، حیدرآباد

پانی کے موجودہ بحران سے سندھ میں فصلوں کو شدید نقصان پہنچنے کا خدشہ ہے، بالخصوص شکار پور، جیکب آباد، لاڑکانہ، کشمور ور دادو ڈسٹرکٹ اس سے شدید متاثر ہوں گے۔

کندھ کوٹ اور خیرپور ناتھن شاہ میں کسانوں نے احتجاجی مظاہرہ کیا، اریگیشن حکام سے مطالبہ کیا کہ نہری پانی فراہم کیا جائے۔