ہوم   >  پاکستان

اپنے تحفظات کا اظہار پارٹی میٹنگز میں کریں، شاہد خاقان کا چوہدری نثار کو مشورہ

1 year ago

سابق وزيراعظم شاہد خاقان عباسی کا کہنا ہے کہ کوئی پارٹی سے بڑا نہیں، چوہدری نثار اپنے تحفظات کا اظہار پارٹی میٹنگز میں کریں، نواز شريف کو نيب عدالت سے انصاف نہيں ملے گا، آج تک ايسا کوئی کيس نہيں جس کی اتنی پيشياں ہوئی ہوں، جب پارٹی کے اندرونی مسائل عوام ميں لے جائيں تو ردعمل بھی آتا ہے، چوہدری نثار اب بھی پارٹی ميں ہيں، پیپلز پارٹی کے ساتھ اتحاد کرکے حکومت بنانے میں کوئی حرج نہیں۔

سماء کے پروگرام نديم ملک لائيو ميں اظہار خيال کرتے ہوئے سابق وزیراعظم شاہد خاقان عباسی نے عام انتخابات کیلئے پارٹی پالیسی اور حکومتی اقدامات سے متعلق کھل کر بات چیت کی۔

بولے کہ حسن عسکری کے نام پر ن لیگ کو اعتراضات تھے، وہ ن لیگ کیخلاف کالم لکھتے رہے ہیں، نگران سیٹ اپ کیلئے غیرمتنازع شخصیت کا ہونا ضروری ہے، ن لیگ نے جو نام دیئے وہ تمام غیر متنازع شخصیات تھیں، تحفظات اور ذاتی رائے کا اظہار کرنا سب کا حق ہے۔

انہوں نے کہا کہ پارٹی سے بڑا کوئی شخص نہیں ہوتا، پارٹی جس حلقے سے کہے گی الیکشن لڑوں گا، وزیراعظم کون ہوگا اس کا فیصلہ پارٹی قائدین کریں گے، مریم نواز کی سربراہی کا فی الحال کوئی فیصلہ نہیں ہوا، آئندہ الیکشن میں ن لیگ کامیاب ہوئی تو شہباز شریف وزیراعظم ہوں گے۔

سابق وزیراعظم کا کہنا ہے کہ چوہدری نثار اب بھی پارٹی میں ہیں، انہیں مشورہ ہے پارٹی کے فیصلے قبول کریں، پارٹی بدلنے والوں کو کبھی فائدے میں نہیں دیکھا، مشرف کا دباؤ برداشت نہ کرنیوالے کچھ لوگ دیگر پارٹی میں گئے، 2013ء میں بہت سے لوگوں کو پارٹی میں شامل کرنے کیخلاف تھا۔

وہ کہتے ہیں کہ دورِ حکومت میں عوام کو تمام معاملات سے آگاہ رکھا، ایکسپورٹ بڑھائے بغیر معیشت بہتر نہیں ہوسکتی، بنگلادیش کی معیشت ایک رات میں بہتر نہیں ہوئی۔

شاہد خاقان عباسی نے سابق صدر سے متعلق سوال پر کہا کہ پرویز مشرف عدالتی احکامات پر بیرون ملک گئے، عدالت چاہتی تو پرویز مشرف کو واپس بلاسکتی تھی، مشرف کا شناختی کارڈ اور پاسپورٹ حکومت نے بلاک نہیں کیا، جو کچھ نواز شریف کے ساتھ ہورہا ہے وہی پرویز مشرف کے ساتھ ہونا چاہئے، پرویز مشرف پر کوئی الزام نہیں تو ان کے کاغذات منظور ہونے چاہئیں۔

مسلم لیگ ن کے سینئر رہنماء نے سابق وزیراعظم کیخلاف مقدمات سے متعلق کہا کہ نواز شریف کیخلاف جو کچھ ہورہا ہے اس کی مثال نہیں ملتی، نواز شریف کے پروٹول میں 40 نہیں بلکہ 5 گاڑیاں شامل ہیں، نیب عدالتوں سے نواز شریف کو انصاف کی توقع نہیں۔

مخالفین پر تنقید کرتے ہوئے شاہد خاقان عباسی کا کہنا تھا کہ گاڑیاں واپس کرنے کی فکر کرنیوالے ایان علی کی فکر بھی کریں، پیپلز پارٹی کے ساتھ اتحاد کرکے حکومت بنانے میں کوئی حرج نہیں، الیکشن خلائی مخلوق کرائے یا کوئی بھی، ن لیگ حصہ لے گی۔

 

آپ کے تبصرے

Your email address will not be published.

 
متعلقہ خبریں