کوئٹہ میں ایف سی مددگار سینٹر پر حملہ، خودکش دھماکے، 5 دہشت گرد ہلاک

Samaa Web Desk
May 17, 2018

کوئٹہ کے علاقے ایئرپورٹ روڈ پر ایف سی مددگار سینٹر پر دہشت گردوں نے حملہ کردیا، 2 خود کش بمباروں نے خود کو دھماکے سے اڑالیا گیا، فورسز کی کارروائی میں 3 دہشت گرد مارے گئے، 4 اہلکار بھی زخمی ہوئے، فورسز نے آپریشن مکمل کرکے علاقے کو کلئیر کردیا۔

آئی ایس پی آر کے مطابق کوئٹہ میں ایف سی مددگار سینٹر پر دہشت گردوں کا حملہ ناکام بنادیا گیا، 5 دہشت گرد بارود سے بھری گاڑی لے کر سینٹر میں داخل ہونا چاہتے تھے، ایف سی کی بروقت کارروائی سے بڑی تباہی سے بچالیا۔

ترجمان پاک فوج کا کہنا ہے کہ 5 دہشت گرد مارے گئے، تمام حملہ آور بظاہر افغان شہری لگتے ہیں، فورسز نے علاقہ کلیئر کرالیا، صورتحال کنٹرول میں ہے۔

آئی ایس پی آر کے مطابق دہشت گردوں سے فائرنگ کے تبادلے میں ایف سی کے 4 جوان بھی زخمی ہوگئے، حملہ گزشتہ روز اہم دہشت گرد کی ہلاکت کا رد عمل ہے۔

نمائندہ سماء کے مطابق کوئٹہ کے ایئرپورٹ روڈ پر کوئلہ پھاٹک کے قریب ایف سی مددگار سینٹر پر دہشت گردوں نے حملہ کردیا، یکے بعد دیگرے زور دار دھماکوں کی آوازیں سنی گئیں، جس کے بعد فائرنگ کا سلسلہ شروع ہوگیا جو وقفے وقفے سے کافی دیر تک جاری رہا۔

حملوں کے بعد سیکیورٹی فورسز نے علاقے کو گھیرے میں لے لیا، کسی بھی آگے جانے کی اجازت نہیں دی گئی، پاک فوج کے جوان بھی علاقے میں پہنچ گئے۔

سیکیورٹی ذرائع کے مطابق 2 خودکش بمباروں نے خود کو دھماکے سے اڑالیا جبکہ فورسز کی جوابی کارروائی میں 3 حملہ آور مارے گئے، فائرنگ کے تبادلے میں 4 اہلکار بھی زخمی ہوئے، فورسز نے آپریشن مکمل کرکے علاقے کو کلئیر کردیا۔

وزیر داخلہ بلوچستان سرفراز بگٹی نے بھی 2 خودکش دھماکوں کی تصدیق کی، واقعے میں کئی افراد زخمی ہوئے، اصل تعداد کو کچھ دیر بعد علم ہوگا، فورسز نے کارروائی کرکے صورتحال پر قابو پالیا۔

وزیر داخلہ کا مزید کہنا ہے کہ گزشتہ روز سیکیورٹی فورسز کی کارروائی میں بچ جانے والے دہشت گردوں نے جوابی حملہ کیا ہے۔

گزشتہ رات فورسز کی کارروائی میں لشکر جھگنوی کا امیر سلمان بادینی مارا گیا تھا، جس 100 سے زائد افراد کے قتل اور کئی دہشت گرد کارروائیوں میں ملوث تھا۔