Tuesday, January 18, 2022  | 14 Jamadilakhir, 1443

نگراں وزیراعظم کےنام پرحکومت اوراپوزیشن میں ڈیڈ لاک برقرار

SAMAA | - Posted: Apr 24, 2018 | Last Updated: 4 years ago
SAMAA |
Posted: Apr 24, 2018 | Last Updated: 4 years ago

اسلام آباد: نگران وزیراعظم کےچناؤمیں حکومت اوراپوزیشن نے اپناامیدوار میدان میں نہ لانے کا فیصلہ کیاہے۔وزیراعظم اوراپوزیشن لیڈرنگراں وزیراعظم کےلیے کوئی نام دینےسےکترانےلگے۔

حکومت اوراپوزیشن نگران وزیراعظم کےانتخاب کےمعاملےمیں حد سے زیادہ احتیاط برتنے کی پالیسی پرگامزن ہیں۔وزیراعظم نےنام کےاعلان کا اختیاراپوزیشن لیڈرکودیدیامگرخورشیدشاہ نگران کے نام کا اعلان شاہد خاقان عباسی  کی جانب سے کيے جانے کے خواہاں ہیں جس کے باعث معاملہ طول پکڑنے لگا۔

دوسری جانب خورشید شاہ نے پارٹی قیادت کوسابق چئیرمین سینیٹ رضاربانی اور فرحت اللہ بابر کا نام نہ دینے کا مشورہ بھی دے ڈالاتاہم انھوں نے کہاکہ نگراں وزیراعظم کےنام پرپارٹی قیادت سےمشاورت نہیں ہوئی،آصف زرداری،بلاول بھٹو کی موجودگی میں پارٹی میں مشاورت کی جائےگی۔ خورشید شاہ نےمزید کہاکہ کوشش ہےکہ نگراں وزیراعظم نیوٹرل ہواوراس کا تعلق کسی پارٹی سےنہ ہو۔اپوزیشن لیڈرنے موقف اختیار کیا کہ نگراں وزیراعظم کیلئے حکومت یا دیگر اپوزیشن جماعتوں کے نام پراتفاق کرنا چاہيے۔ انھوں نے واضح کیاکہ عام انتخابات جلدازجلد ہونے چاہیے،پاکستان میں ہر آدمی کی کسی بھی پارٹی سے وابستگی ضرور ہے،وابستگی اوربات ہےکسی بھی پارٹی کا عہدے دار ہونا الگ بات ہے۔

WhatsApp FaceBook
تازہ ترین
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube