پولیس کا چوری کے الزام میں گرفتار خواتین کے ساتھ ناروا سلوک

Samaa Web Desk
April 16, 2018

رپورٹ : ساحل جوگی

سکھر : سکھر میں چوری کے شبہے میں پکڑی گئی خواتین سے پولیس اہلکاروں کی بدتمیزی، خواتین کو سرعام گھسیٹتے رہے، زبردستی رکشے میں ڈال کر تھانے لے گئے، مرد ملزمان کے ساتھ لاک اپ کردیا۔

سکھر کے نجی اسپتال میں خاتون مریضہ کا پریس چوری ہوا، الزام ساتھ بیٹھی دوسری خاتون مریضہ پر لگا، اسپتال میں بھی خواتین نے مبینہ ملزمہ کو گھیرے میں لے لیا، تشدد کا نشانہ بنایا اور پولیس کے حوالے کردیا۔

پولیس اہلکاروں نے بھی پھرتی دکھائی اور لیڈی اہلکاروں کے پہنچنے سے پہلے ہی ملزمہ کو دھرلیا، موبائل کے بجائے رکشے میں زبردستی ٹھونسنے کی کوشش کی، پاؤں ملزمہ پر رکھ کر تھانے لے گئے۔

پولیس نے مرد ملزمان کے ساتھ ہی خاتون کو لاک اپ کردیا، تشدد کی وڈیو سوشل میڈیا پر وائرل ہوئی تو وزیر داخلہ سندھ نے نوٹس لے لیا، ایس ایس پی سکھر نے ملوث اہلکاروں کو معطل کرکے لاک اپ کروادیا۔