عدالت سےمحاذ آرائی نوازشريف کےحق میں نہیں،اہم ساتھی کامشورہ آگیا

October 12, 2017
 

ٹیکسلا: سابق وزیرداخلہ چوہدری نثارنےکہاہےکہ عدالت سے کسی قسم کی محاذ آرائی نہیں ہونی چاہیئے،عدالت سے محاذ آرائی نواز شریف کے حق میں نہیں۔

 ٹیکسلا میں میڈیا سے گفتگو کرتےہوئے چوہدری نثارعلی خان نےکہاکہ ملک میں جمہوریت، رول آف لاء ہے۔ مسلم لیگ ن کےرہنماکاکہناتھاکہ عدالت سے کسی قسم کی محاذ آرائی نہیں ہونی چاہیئے،عدالت سے محاذ آرائی نواز شریف کے حق میں نہیں۔

سابق وزیرداخلہ نےکہاکہ ہمیں عدالت میں جاکرکیسز کو زوروشور سے لڑنا چاہیئے۔عدالتیں حقائق پر فیصلہ کررہی ہیں۔ ایک عدالت سے انصاف نہیں ملا تو دوسری سے مل جائیگا۔ کوئی مقدمہ تحقیقات سے پہلے درج کرنا درست نہیں۔

سیکورٹی فورسزسے متعلق چوہدری نثارنے کہاکہ ہماری فورسز میں صلاحیت ہے کہ وہ خود ملک میں آپریشن کرسکتی ہے۔ افواجِ پاکستان حالتِ جنگ میں ہیں ، وہ جنگ جیت رہی ہے۔ اگر پاکستان میں آپریشن ہو تو افغانستان میں بھی آپریشن ہو۔

مسلم لیگ کے رہنما نے واضح کیاکہ مجھے شیخ رشید کے مطابق اپنی سیاست نہیں چلانی۔ان کی سیاست الگ ہے، میری الگ ہے۔انھوں نے حکومت کومشورہ دیاکہ حکومت گھرکوصاف کرے، اقدامات کرے۔وزیراعظم اداروں پر تنقید کا نوٹس لیں۔

ایک سوال پرچوہدری نثارنےکہاکہ زرداری صاحب نے میرے حوالے سے سوال پر جواب نہیں دیا ، میں بھی زرداری صاحب کے حوالے سے جواب نہیں دوں گا۔

اپنے حوالےسے چوہدری نثارنےکہاکہ میں اب بھی سیاست کا طالبعلم ہوں،عقل کلُ نہیں،اپنی سمجھ کے مطابق بات کرتا ہوں۔انھوں نے مزیدانکشاف کیاکہ 2013سے پہلے پارٹی سے کبھی ناراض نہیں ہوا۔2013سے پہلے میرا مشورہ سنا ضرورجاتا تھا۔ سابق وزیرداخلہ نے واضح کردیاکہ ن لیگ میں کوئی دو دھڑے نہیں ہیں۔  سماء

Email This Post
 

:ٹیگز

 

آپ کے تبصرے

Your email address will not be published.