Thursday, October 1, 2020  | 12 Safar, 1442
ہوم   > بین الاقوامی

امریکا نے اہم ترین القاعدہ رہنما کی ہلاکت کی تصدیق کردی

SAMAA | - Posted: Mar 26, 2017 | Last Updated: 4 years ago
SAMAA |
Posted: Mar 26, 2017 | Last Updated: 4 years ago

US

واشنگٹن:امریکا نے پاکستان کو انتہائی مطلوب دہشتگرد قاری یاسین کی افغانستان میں ہلاکت کی تصدیق کردی۔ پینٹاگون کے مطابق قاری یاسین انیس مارچ کو افغان صوبے پکتیکا میں ڈرون حملے میں مارا گیا۔

پاکستان کوانتہائی مطلوب دہشتگرد کی افغانستان میں ہلاکت کی تصدیق ہو گئی۔ امریکی محکمہ دفاع پنٹاگون سے جاری پریس ریلیز کے مطابق  قاری یاسین19مارچ کوافغانستان میں ڈرون حملے میں ہلاک ہوا۔ قاری یاسین کوافغان صوبے پکتیکامیں نشانہ بنایاگیا۔ القاعدہ رہنما امریکن سروس اور سری لنکن ٹیم پرحملےمیں ملوث تھا۔

امریکی وزیردفاع جیمز میتھس کا کہنا ہے کہ قاری یاسین جیسےدہشتگرداسلام کوبدنام کرتےہیں۔ بےگناہوں کونشانہ بنانے والے انصاف سے بچ نہیں سکتے۔

قاری یاسین پاکستان میں متعدد حملوں میں ملوث تھا جن میں 2008 میں اسلام آباد کے میریٹ ہوٹل پر ہونے والے حملے کی منصوبہ بندی بھی شامل ہے جس میںدو امریکی فوجی اہلکاروں سمیت 50 سے زیادہ شہری جاں بحق ہوئے تھے۔ قاری یاسین 2009 میں لاہور کے علاقے مناواں میں سری لنکن کرکٹ ٹیم پر ہونے والے حملے میں بھی ملوث تھا جس میں چھ  پولیس اہلکار جاں بحق ہوئے تھے۔

واضح رہے کہ دفترِخارجہ متعدد بار یہ موقف اختیار کر چکا ہے کہ پاکستان میں حملے کرنے والے دہشتگردوں نے افغانستان میں پناہ لے رکھی ہے۔ قاری یاسین کی ڈرون حملے میں ہلاکت اس موقف کے درست ثابت ہونے کا ٹھوس ثبوت ہے۔ سماء

WhatsApp FaceBook

آپ کے تبصرے

Your email address will not be published.

متعلقہ خبریں
WhatsApp FaceBook
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube