پاناما لیکس کی دوسری قسط؛400 بڑے نام منظرعام پر

SAMAA | - Posted: May 9, 2016 | Last Updated: 5 years ago
SAMAA |
Posted: May 9, 2016 | Last Updated: 5 years ago

پاناما سٹی: پاناما پیپرز کی دوسری قسط میں آف شور کمپنیوں سے تعلق رکھنے والے 400 معروف تاجروں، سیاستدانوں اور شوبز شخصیات سمیت چار سو پاکستانیوں کے نام سامنے آئے ہیں۔ تفصیلات کے مطابق دوسری فہرست میں عمران خان کے دوست لندن میں مقیم ذلفی بخاری کا نام سامنے آیا ہے۔ ذوالفقار عباس بخاری اپنی...

پاناما سٹی: پاناما پیپرز کی دوسری قسط میں آف شور کمپنیوں سے تعلق رکھنے والے 400 معروف تاجروں، سیاستدانوں اور شوبز شخصیات سمیت چار سو پاکستانیوں کے نام سامنے آئے ہیں۔

تفصیلات کے مطابق دوسری فہرست میں عمران خان کے دوست لندن میں مقیم ذلفی بخاری کا نام سامنے آیا ہے۔ ذوالفقار عباس بخاری اپنی بہنوں کی شراکت سے آف شور کمپنی کے مالک ہیں۔ پی ٹی آئی کے عبد العلیم خان کا نام بھی فہرست میں شامل ہے۔

مزید پڑھیں؛ تیسری بارمیرانام پانامالیکس میں کیسےآگیا؟علیم خان

3

پاناما لیکس میں سامنے آنے والے نام میں ذلفی بخاری کا نام بھی شامل ہے جنکے خاندان کی چھ آف شور کمپنیاں ہیں۔ ذلفی بخاری کے والد واجد بخاری دو ہزار آٹھ میں نگراں وفاقی وزیر رہ چکے ہیں۔ ذلفی بخاری کے چچا اٹک سے پی ٹی آئی کے ایم پی اے ہیں۔

مزید پڑھیں؛ پانامالیکس راؤنڈٹو،ذوالفقاربخاری کا نام بھی سامنے آگیا

2

دبئی کی جیل میں قید پیپلز پارٹی اور ایم کیو ایم کی قیادت کے قریبی ساتھی طارق اسلام کا نام بھی شامل ہے۔ لنک انویسٹمنٹ نامی کمپنی بے نظیر بھٹو کے کزن طارق اسلام کی ملکیت ہے۔

مزید پڑھیں؛ پاناما لیکس کا دوسرا دھماکا آج ہوگا

4

پاناما لیکس میں عرفان اقبال پوری کا نام بھی سامنے آیا ہے۔ تین آف شور کمپنیوں نے مالک عرفان اقبال پوری آصف زرداری اور متحدہ قائد کے دوست ہیں۔ عرفان اقبال پوری پر پی ایس او کو لوٹنے کے الزامات تھے، نیب نے ریفرنس دائر کرکے پلی بارگین کرلی مگر رقم واپس نہیں لی۔ عرفان اقبال پوری خود کو آصف زرداری کا پارٹنر کہتا ہے۔ ایم کیو ایم کے قائد کی ضمانت کے لئے دس لاکھ پاؤنڈ کا زر ضمانت بھی جمع کرایا۔

مزید پڑھیں؛ پاناما لیکس کادوسراایڈیشن،اہم شخصیات کےرازافشا

سیٹھ عابد کے بیٹے ساجد محمود موس گرین لمیٹڈ نامی آف شور کمپنی کے مالک ہیں۔ اکبر محمود، اعجاز محمود اور بشریٰ اعجاز بھی برٹش ورجن آئی لیںڈ میں قائم اس کمپنی کے پارٹنر ہیں۔ اس خاندان کی تیس کمپنیاں عابد گروپ کےتحت کام کرتی ہیں۔

مزید پڑھیں؛ پاناما لیکس کا پارٹ ٹو؛سیٹھ عابد کی30 آف شورکمپنیاں سامنے آگئیں

سیٹھ عابد کے علاوہ پورٹ قاسم اتھارٹی کے سابق چیئرمین عبدالستار ڈیرو کا نام بھی شامل ہے۔ عبدالستار ڈیرو نے این آر او سے فائدہ اٹھا کر مقدمات ختم کرائے تھے۔ عبدالستار ڈیرو زرداری خاندان کے انتہائی قریب سمجھے جاتے ہیں جبکہ متحدہ عرب امارات میں زرداری کے کاروبار کی نگرانی عبدالستار ڈیرو کرتے ہیں۔

172.16.16.9_07_20160509090512554

دو مرتبہ آسکر ایوارڈ جیتنے والے شرمین عبید چنائے کی والدہ کا نام بھی سامنے آگیا۔ شرمین چنائے کی والدہ صبا عبید تین آف شور کمپنیوں کی مالک ہیں، جبکہ ٹاولرز لمیٹڈ کی مالکان میں شرمین عبید چنائے کا نام بھی شامل ہے۔ کمپنی ٹیکسٹائل کی بڑی برآمد کنندہ ہے اور امریکی وال مارٹ کو بھی مال بھیجتی ہے۔ بیلزی گروپ نامی ایک آف شور کمپنی چنائے خاندان کی ملکیت ہے۔ اس کمپنی کی نیویارک میں ڈونلڈ ٹرمپ کے ٹرمپ ٹاور میں دو جائیدادیں ہیں۔

مزید پڑھیں؛ پاناما لیکس میں شرمین عبیدکانام آگیا

اسکے علاوہ پاناما لیکس میں پیپلز پارٹی کی سابق سینیٹر رخسانہ زبیری، سابق وزیر صحت نصیر خان، نصیر خان کا بیٹا جبران اور بھائی ظفر اللہ خان کے شیئر ہولڈرز، سابق ایڈمرل مظفر حسین کے صاحبزادے اور سچل اسٹوڈیو کے بانی عزت مجید کا نام بھی موجود ہے۔ عزت مجید دہری شہریت کے حامل ہیں اور پاکستان میں بھی انکا کاروبار ہے۔ کراچی چیمبر کے سابق صدر شوکت احمد شیل کمپنی کے مالک نکلے۔

واضح رہے کہ ان آف شور کمپنیوں کے ذریعے غیر ملکی بینکوں میں اکاؤنٹ بھی کھلوائے گئے۔ سینیر صحافی عمر چیمہ کا کہنا ہے کہ پاناما پیپرز کی فہرست آخری نہیں ابھی اور کچھ بھی منظر عام پر آنا باقی ہے۔ سماء

WhatsApp FaceBook

آپ کے تبصرے :

Your email address will not be published.

متعلقہ خبریں
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube