پاکستان، افغانستان کو مشترکہ دشمن کا سامنا ہے: نواز شریف

SAMAA | - Posted: Dec 9, 2015 | Last Updated: 5 years ago
SAMAA |
Posted: Dec 9, 2015 | Last Updated: 5 years ago

172.16.16.9_07_20151209110012489-680x454

اسلام آباد: وزيراعظم نوازشريف نے ہارٹ آف ايشیا کانفرنس کے افتتاحی خطاب ميں کہا کہ افغانستان پاکستان کيلئے پڑوسي سے بڑھ کر ہے، خطے کي سلامتي پاکستان کي اولين ترجيح ہے۔

افتتاحي خطاب ميں وزيراعظم پاکستان نواز شريف نے کہا کہ افغانستان کے ساتھ ميزباني اعزاز ہے، افغانستان کا امن ہي خطے ميں امن کي ضمانت ہے۔ کانفرنس کي تھيم خطے کي سلامتی ميں تعاون کا فروغ ہے، باہمي روابط ميں اضافہ کي کوشش ہے۔

مزید پڑھیں: وزیراعظم، افغان صدر نے ہارٹ آف ایشیا کانفرنس کا افتتاح کردیا

وزيراعظم نے بتايا کہ پاکستان نے دہشت گردي کے خلاف آپريشن ضرب عضب اور نيشنل ايکن پلان کے ذريعہ کاميابي سے قابو پايا ہے۔ داعش ايک ابھرتا خطرہ ہے، جس سے نمٹنے کيلئے پرعزم ہيں۔

172.16.16.9_07_20151209110020321-680x454

اس موقع پر افغان صدراشرف غنی نے کہا کہ افغانستان تيزی سے خطے کي تعميرميں اپنا حصہ ڈال رہا ہے، ملک کي سلامتي ميں افغان فوج کا کردار بہتر ہورہا ہے۔ طالبان ميں تقسيم کے سبب قيام امن ميں رکاوٹيں ہيں۔

اشرف غني نے کہا کے داعش کي دہشت گرد برائے دہشت گردي ہے، اور اس خطرے سے نمٹنا ہوگا۔ سماء

WhatsApp FaceBook

آپ کے تبصرے :

Your email address will not be published.

متعلقہ خبریں
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube