Tuesday, November 30, 2021  | 24 Rabiulakhir, 1443

لاہور کی دبنگ بائیکر کُڑی

SAMAA | - Posted: Aug 8, 2015 | Last Updated: 6 years ago
SAMAA |
Posted: Aug 8, 2015 | Last Updated: 6 years ago

رپورٹر ثمرہ افضل:

لاہور : کسی نے دیوانہ کہا تو کسی نے نادان!  اکیلی لڑکی ،  پُر خطر سفر اور وہ بھی موٹر سائیکل پر،  لاہور کی بیس سالہ زینتھ کوئی عام لڑکی نہیں، پاکستان کے شمالی علاقہ جات کے خطرناک راستے جہاں ماہر ڈرائیور بھی گاڑی یا جیپ احتیاط سے چلاتے ہیں ، ان ہی پہاڑی راستوں پر زینتھ اپنی موٹر سائیکل دوڑاتی آزاد کشمیر کی خوبصورت وادی میں پہنچ گئی۔

زینتھ کیلئے تو موٹر سائیکل پر ہی پاکستان اور دنیا بھر کی سیرکرنا  زندگی کا سب سے اہم مشن ہے، اس روشن آنکھوں میں اپنے مرحوم والد کے ادھورے خواب مکمل کرنے کی امید چمک رہی ہے، دس ماہ کی عمر میں یتیم ہونے والی زینتھ موٹر سائیکل پر دنیا بھر کی سیر مکمل کر کے اپنے والد کا ادھورا سپنا پورا کرنا چاہتی ہے۔ 

 

زینتھ کے سفری سامان میں ہیلمٹ، گلوز، جیکٹ، چھوٹا سا چولہا، کیمپنگ کیلئے ٹینٹ، ٹائر ٹیوب اور کھانے پینے کی چند اشیا شامل ہیں۔

 

سماٗ سے گفت گو کرتے ہوئے زینتھ نے بتایا کہ وہ وادی کشمیر کے حُسن اور کشمیریوں کی مہمان نوازی سے بہت متاثر ہوئی ہے ،  اب اس کا اگلا مشن موٹر سائیکل پر چترال جانا اور سیلاب زدگان کی مدد کرنا ہے  اور اس سفر میں زینتھ کا  بھائی سلطان عرفان بھی اپنی بائیک پر ان کے ہمراہ ہوگا۔

موٹر سائیکل چلا کر اکیلی کشمیر جانے والی لڑکی کا کہنا تھا  کہ راستے میں اکثر ڈر بھی لگتا تھا لیکن مجھے اللہ اور اپنی ماں کی دعاوں پر مکمل یقین تھا، بائیکر گرل کی والدہ  نے سماٰء  کو بتایا کہ وہ اس کے کامیاب دورے پر بہت خوش ہیں اور انہیں امید ہے کہ ان کی بیٹی بہادری کا مظاہرہ کرتے ہوئے اپنا مشن مکمل کریگی۔  

 

مارکیٹنگ کی طالبہ زینتھ کا ماننا ہے کہ پاکستانی لڑکیوں میں بہت ٹیلنٹ ہے ، لیکن منفی معاشرتی رویوں کے باعث انہیں آگے نہیں بڑھنے دیا جاتا، دبنگ گرل نے بتایا کہ اس کو بھی تنقید کاسامنا کرنا پڑتا ہے لیکن وہ اس وجہ سے اپنے خواب ادھورے نہیں چھوڑنے والی ، اسے تو بس سڑکوں پر دو پہیوں کی سواری دوڑاتے ہی جانا ہے۔ سماء

WhatsApp FaceBook
تازہ ترین
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube