Tuesday, November 30, 2021  | 24 Rabiulakhir, 1443

پروپوزکرنےوالےطلباءکویونیورسٹی سےنکالنےپرشوبزستاروں کاردعمل

SAMAA | - Posted: Mar 15, 2021 | Last Updated: 9 months ago
Posted: Mar 15, 2021 | Last Updated: 9 months ago

تصویر: سماء ڈیجیٹل

یونیورسٹی آف لاہورمیں طلباء کے سامنے ایک دوسرے کو پروپوز کرنے پریونیورسٹی سے فارغ کیے جانے والے طلباء کے معاملے پرشوبز شخصیات نے بھی اپنے ردعمل کا اظہارکیا ہے۔

ٹوئٹرپروائرل ویڈیومیں دیکھا گیا تھا کہ نوجوان جوڑا ایک دوسرے کو پھول پیش کرنے کے بعد گلے ملتا ہے، اس دوران وہاں موجود طلباء خوشی مناتے ہوئے انہیں داد دینے کے ساتھ ساتھ تصاویراورویڈیوز بھی بنارہے ہیں ۔

ویڈیو وائرل ہونے کے بعد یونیورسٹی کا جاری کردہ حکمنامہ سامنے آیا کہ” دونوں طالبعلموں کو لاہور یونیورسٹی اور اس کے تمام ذیلی کیمپس کے احاطے میں داخلے سے روک دیا گیا ہے”۔

طلباء کی بےدخلی کے فیصلے کے بعد ٹوئٹراور دیگرسوشل میڈیا پلیٹ فارمز پراس بحث کا آغاز ہو کہ آیا یہ ایک صحیح فیصلہ ہے یا نہیں، اسی حوالے سے بیشترشوبزستارے بھی دونوں کی حمایت میں آگے آئے۔

گلوکار شہزاد رائے نے اپنی طنزیہ ٹویٹ میں لکھا کہ سڑکوں پرخواتین کے ساتھ مار پیٹ کرنے کا کوئی نوٹس نہیں لیتا ، لیکن ایک جوڑے کا ایک دوسرے سے گلے ملنا جرم بن جاتا ہے۔

اداکر یاسرحسین نے اپنی مخالفت کااظہارامیتابھ بچن کو یونیورسٹی آف لاہور کا پرنسپل بنا کرکیا۔ امیتابھ کی یہ تصویربالی ووڈ فلم ”محبتیں ” سے لی گئی ہے جس میں انہوں نے ایک انتہائی سخت گیر پرنسپل کا کردار نبھایا تھا۔

اداکار نے کیپشن میں لکھا ”اس ملک میں عورتوں کو روڈ پرذلیل کرنے والا مرد ہے ، پیار کرنے والا بےشرم ہے۔ شادی کا جھانسا دینے والا ابھی بھی یونیورسٹی میں ہے اور پروپوزل دینے والا آوٹ ”۔

شنیرا اکرم نے سوال اٹھایا کہ ہم معاشرے میں کس طرح کی مثال قائم کر رہے ہیں؟۔ انہوں نے لکھاکہ ” خواتین کا عالمی دن ابھی ،منایا گیا ہے اور یہاں ایک اعلیٰ درجے کی یونیورسٹی ساتھیوں کی سیکورٹی میں ایک مرد سے شادی کی درخواست کرنے والی نوجوان لڑکی کو بےدخل کررہی ہے ”۔

میرا سیٹھی نے اپنے غم وغصے کا اظہاران الفاظ میں کیا ” دو لاہوری طلباء کو پبلک کے سامنے شادی کے پروپوزل اوراس کے بعد پیارکےاظہارپر یونیورسٹی سے نکال دیا گیا، یہ ایک پُرتشدد زہریلا پن ہے”۔

اداکارہ اشناء شاہ نے سوال اٹھایا ” لاہور، پیارکہاں ہے؟ ”۔

جہاں بہت سے سوشل میڈیا صارفین نے ان سیلیبرٹیز کے موقف کی حمایت کی وہیں بڑی تعداد ایسے افراد کی بھی تھی جنہوں نے تعلیمی اداروں میں ایسے اقدام کوعام کرنے کی روش پر انہیں تنقید کا نشانہ بنایا۔

WhatsApp FaceBook
تازہ ترین
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube