Tuesday, January 18, 2022  | 14 Jamadilakhir, 1443

ملتان میں 170 سال قدیم عمارت توجہ کی مستحق

SAMAA | - Posted: Nov 28, 2019 | Last Updated: 2 years ago
SAMAA |
Posted: Nov 28, 2019 | Last Updated: 2 years ago

ملتان میں 1849 میں بننے والامونومنٹ آف پیڑک الیگزینڈرمينار محکمہ آثار قدیمہ کی عدم توجہ کا شکار ہے۔

محکمہ آثار قدیمہ کی غفلت کا ایک اور نقصان سامنے آگیا ہے۔مونومنٹ آف پیٹرک الیگزینڈر مینار ٹوٹ پھوٹ کا شکار ہے۔1849 میں بنے والے اس مونومنٹ میں ایسٹ انڈیا کمپنی کے 2 افسران پیٹرک الیگزینڈر اور ولیم اينڈرسن کی قبریں بھی ہیں جنہيں 1848 میں قتل کردیا گیا تھا۔

قیمتی ٹائلز اور فرش مخدوش حالت ميں ہے جبکہ آثارقدیمہ حکام تاریخی ورثے کی جلد مرمت کی یقین دہانی کراتے ہيں ۔ان کا کہنا ہے کہ ہم نے پہلے بھی مرمت کروائی تھی اور جلد اسکیم بنا کراس پر کام شروع کیا جائے گا۔دونوں افسران کے قتل کے بعد انگریزوں اور سکھوں میں جنگ چھڑ گئی تھی۔

روایت کے مطابق پیٹرک الیگزینڈر اور ولیم اينڈرسن کو پہلے شاہی عیدگاہ میں دفن کیا گیا تھا اور پھر 1849 میں یہاں دفن کرکے یادگار تعمیر کی گئی تھی۔

WhatsApp FaceBook
تازہ ترین
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube