ہوم   > Latest

کراچی آنے والے ان فوڈ اسٹریٹس کے کھانے ضرور کھائیں

3 months ago

اگر آپ کراچی آنے والے ہیں اور سونے پر سہاگہ کہ آپ کھانے کے بھی حد سے شوقین ہیں تو تیار ہوجائیں۔ یہ شہر اپنی باہیں کھول کر نہ صرف آپ کو خوش آمدید کہے گا بلکہ یہاں ایسی کھانے کھابے کی جگہیں ہیں جو آپ کو انگلیاں چاٹنے اور مدتوں کھانا یاد رکھنے پر مجبور کریں گی۔

ذیل میں کراچی کی مشہور فوڈ اسٹریٹس کا مختصر احوال آپ کی معلومات کیلئے دیا گیا ہے، جب بھی کراچی آئیں، ان جگہوں کے چٹخارے ضرور آزمائیں۔

برنس روڈ

شہر کے مرکزی علاقے صدر کے نزدیک واقع اس فوڈ اسٹریٹ کو دیسی و ثقافتی کھانوں کا اہم مرکز سمجھا جاتا ہے جہاں لذیذ و مزیدار کھانوں کے کئی اسٹالز پورا سال لگے رہتے ہیں۔ جی ہاں پرانا کراچی بھی اور کراچی کی سب سے پرانی فوڈ اسٹریٹ برنس روڈ، پورے کراچی میں کسی کو کچھ پتا ہو یا نہ ہو اسے برنس روڈ کا ضرور پتا ہوتا ہے اور یہاں کھانے کی جگہیں بھی سب کو پتا ہیں۔ گول گپے ہوں یا بن کباب، باربی کیو ہو یا بریانی، مصالحے لگے تکہ بوٹی یا بروسٹ یہاں سب کچھ آپ کو اپنی جیب کے مطابق میسر آسکتا ہے، جب کہ کھانے کی کوالٹی بھی سبحان اللہ۔ سو جب بھی کراچی آئیں اس فوڈ اسٹریٹ کا چکر ضرور لگائیں۔

بوٹ بیسن

بوٹ بیسن کی فوڈ اسٹریٹ کا شمار بھی کراچی کی پرانی فوڈ اسٹریٹ میں ہوتا ہے، جہاں ہر طرح کی فوڈ چینز کے آؤٹ لیٹ موجود ہیں، یہاں دیسی کے ساتھ ساتھ ولایتی کھانوں کے ریسٹورنٹس بھی موجود ہیں، کچھ ریسٹورنٹس میں آؤٹ ڈور بیٹھے کی سہولت بھی موجود ہے۔

سندھی مسلم سوسائٹی

کراچی کے پوش علاقوں میں شمار ہونے والا سندھی مسلم سوسائٹی کے علاقے میں واقع فوڈ اسٹریٹ بھی اپنی مثال آپ ہے، دوپہر سے اٹھنے والی کھانے کی دل لبہانے والی خوشبویں رات گئے تک اس علاقے کی سڑکوں پر حکمرانی کرتی ہیں، اگر آپ کو بھوک نہ بھی لگے تو آپ کچھ نہ کچھ کھائے پیئے بغیر نہیں رہ سکتے ہیں۔ یہاں صرف کھانے ہی نہیں کافی، لسی، جوسز اور بیکری آئٹمز کی بھی وافر ورائٹی موجود ہے۔ انواع و اقسام کے مزیدار کھانوں کی جگہوں سے سجی یہ فوڈ اسٹریٹ چٹوروں کیلئے کسی جنت سے کم نہیں۔

حسین آباد

کراچی کے دیگر علاقوں کی طرح حسین آباد، عائشہ منزل اور ارد گرد کے علاقوں میں حسین آباد کی فوڈ اسٹریٹ بہت مشہور ہے، یہاں کے کٹاکٹ کی تو کیا ہی بات ہے، جب کہ عائشہ منزل فوڈ اسٹریٹ پر مقامی اسپتال کی برابر والی گلی کو گولا گنڈا اور سوپ کی بھر مار کی وجہ سے گولا گنڈا اور سوپ گلی بھی کہا جاتا ہے۔ اس فوڈ اسٹریٹس پر150سے زائد کھانے پینے کی اشیا کے ہوٹلز، باربی کیو ، فوڈ سینٹر ، حلیم ، بریانی اور دیگر اشیاء کی دکانیں اوراسٹالز ہیں، فوڈ اسٹریٹس کے اطراف یہاں زیادہ تر دکانیں میمن کمیونٹی کے افراد کی ہیں۔ گرمیوں کے موسم میں یہاں کی گلیاں مختلف ذائقوں کے مشروبات ، گولا گنڈا ، آئسکریم اور فالودہ فروخت ہوتا ہے، جب کہ سردیوں میں اس گلیوں میں چکن کارن سوپ اور یخنی فروخت کی جاتی ہے،یہ تمام اشیا ٹھیلوں پر فروخت ہوتی ہے،اس گلی میں گاہکوں کے بیٹھنے کے لیے خصوصی انتظامات کیے گئے۔ تاہم چنچی رکشوں اور بسوں کی وجہ سے یہ علاقہ رش کا شکار رہتا ہے۔

محمد علی سوسائٹی

بنگلوں کے بیچوں بیچ بنی یہ مختصر اور خوبصورت فوڈ اسٹریٹ بھی اپنی مثال آپ ہے۔ یہاں  مشہور کے بیس کے ریسٹورنٹ میں سالوں پہلے 30 روپے کے عوض ملنے والی لمبی کون لوگوں کو اب بھی یاد ہے۔ یہاں 500 سے لے کر اچھے سے اچھے بجٹ میں شاندار افطاری کی جاسکتی ہے۔ اس اسٹریٹ پر آپ کئی مشہور ریسٹورنٹس کے آوٹ لٹ سے اپنی پسند کے کھانے کھا سکتے ہیں۔ امریکی، اطالوی اور چینی فوڈ چین کے فرنچائز آپ کو باآسانی مل جائیں گے۔ دیسی تڑکے کیلئے بھی یہاں مناسب اسٹالز موجود ہیں، محمد علی سوسائٹی سے آگے جاکر دھوراجی کے گولا گنڈے بھی پورے کراچی میں مشہور ہیں، جب کہ شہر کے اسی حصے سے قریب بہادر آباد چار مینار چورنگی کے قریب گول گپے بھی مشہور ہیں۔

زمزمہ:

صبح کے کسی اوقات ، دوپہر شام یا رات غرض کھانے کے شوقین اور وہ بھی نفاست سے کھانے والوں کیلئے یہ ایک بہترین آپشن ہے، زمزمہ کی فوڈ اسٹریٹ بھی آپ کو جیب ہلکی کیے بغیر یہاں سے جانے نہیں دے گی، جہاں روایتی کھانوں کے ریسٹورنٹس کے علاوہ تھائی، چائنیز اور دیگر ورائٹی دستیاب ہے۔ یہاں کے کچھ ریسٹورنٹس میں خصوصی بوفے اور فوڈ ڈیلز کا اہتمام کیا جاتا ہے جو 1000 سے 1500 کے درمیان ہیں ۔

 

آپ کے تبصرے

Your email address will not be published.

 
متعلقہ خبریں
 
 
 
 
 
 
 
 
مقبول خبریں