خبردار؛لپ اسٹک کااستعمال جان لیواہوسکتاہے

January 9, 2018
 

اسلام آباد: پاکستان میں ملاوٹ زدہ کھانے پینے کی اشیا کے بعد اب غیرمعیاری اور ملاوٹ زدہ کاسمیٹکس حسین چہروں کے لیے خطرہ بنتی جارہی ہے۔

خدا جب میک اپ دیتا ہے،نزاکت آہی جاتی ہے۔نازک لبوں پر گلاب کی سی سرخی زیب دیتی ہے۔

مشہور برانڈز کا متبادل،سستی مگر جعلی لپ اسٹک لبوں کے حسن کوعارضی طور پر بھڑکاتی ہے لیکن بیماریوں کا دروازہ بھی کھولتی ہے۔

غیر معیاری لپ اسٹکس میں شامل اجزا مرکری اور سیسہ انسانی جلد پر خطرناک اثرات مرتب کرتے ہیں لیکن خواتین کی اکثریت لپ اسٹک خریدتے وقت صرف رنگ ہی پسند کرتی ہے۔

بازار میں موجود ملاوٹ زدہ اشیائے خورد و نوش کی بھرمار میں یہ امید تو نہیں لگائی جاسکتی کہ حکومت غیرمعیاری کاسمیٹکس پر پابندی عائد کرے گی۔ خریداروں کو خود ہی ہوشیار رہنا پڑے گا۔

لپ اسٹک پھول سے نازک لبوں کی دلکشی تو بڑھاتی ہے مگر معیاری نہ ہو تواس کے یہ شوخ رنگ آپ کے جانی دشمن بھی بن سکتے ہیں۔  سماء