Thursday, January 27, 2022  | 23 Jamadilakhir, 1443

امریکا کو چین سے سب سے بڑا خطرہ کس بات پر ہے؟ 

SAMAA | - Posted: Dec 6, 2021 | Last Updated: 2 months ago
SAMAA |
Posted: Dec 6, 2021 | Last Updated: 2 months ago

امریکا اور چین کے درمیان فوجی قوت بڑھانے اور عالمی سطح پر زیادہ سے زیادہ علاقوں تک رسائی کا مقابلہ زوروں پر ہے۔   

امریکی اخبار وال اسٹریٹ جرنل نے امریکی انٹیلی جنس کی تازہ خفیہ رپورٹوں کے حوالے انکشاف کیا ہے کہ چین وسطی افریقا کے ملک استوائی گنی میں اپنا ایک فوجی اڈا بنانے کا ارادہ رکھتا ہے۔

امریکی حکام کے مطابق یہ اقدام بحرِ اوقیانوس میں چین کو پہلے مستقل بحری وجود کا موقع فراہم کرے گا۔ رپورٹ کے مطابق امریکی حکام نے نے خفیہ انٹیلی جنس معلومات کی تفصیلات پر گفتگو سے انکار کر دیا۔

رپورٹ کے مطابق امریکی حکام کا خیال ہے کہ چینی جنگی بحری جہاز امریکا کے مشرقی ساحل کے نزدیک دوبارہ سے اسلحہ سے لیس ہونے اور دیکھ بھال کی کارروائیوں کی صلاحیت رکھتے ہیں جو امریکا کے لیے باعث تشویش ہے۔

دوسری جانب امریکا استوائی گنی کو اس بات پر قائل کرنے کی کوشش کر رہا ہے کہ وہ چین کی پیشکش کو مسترد کر دے۔ امریکی قومی سلامتی کے نائب مشیر جون وائنر نے اس سلسلے میں اکتوبر میں استوائی گنی کا دورہ بھی کیا تھا۔

امریکی حکام نے چین پر یہ الزام بھی عائد کیا ہے کہ چین استوائی گنی کے اقتصادی دارالحکومت باٹا پر کنٹرول چاہتا ہے جہاں خلیج گنی کے گہرے پانی میں چین کی ایک تجارتی بندرگاہ اور گیبون شہر کو وسطی افریقا سے ملانے والی ایک بڑی شاہراہ شامل ہے۔

واضح رہے کہ رواں سال اپریل میں افریقا میں امریکی عسکری کمان کی قیادت کرنے والے کمانڈر جنرل اسٹیفن ٹاؤنسنڈ نے سینیٹ کے سامنے ایک بیان میں کہا تھا کہ چین کی جانب سے سب سے بڑا خطرہ افریقا میں بحر اوقیانوس کے ساحل پر عسکری طور پر سودمند ایک بحری تنصیب ہے۔
چین کے سرکاری اعداد و شمار کے مطابق چین کی ریاستی کمپنیوں نے گزشتہ 2 دہائیوں میں افریقا کے گرد 100 تجارتی بندرگاہیں بنائی ہیں۔

WhatsApp FaceBook
تازہ ترین
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube