Wednesday, December 8, 2021  | 3 Jamadilawal, 1443

امریکی ہائپرسونک میزائل تجربہ ناکام، چین و روس بازی لےگئے

SAMAA | - Posted: Oct 22, 2021 | Last Updated: 2 months ago
SAMAA |
Posted: Oct 22, 2021 | Last Updated: 2 months ago

امريکا کا ہائپر سونک ميزائل کا تجربہ ناکام ہو گيا جس کا اعتراف کرتے ہوئے پينٹاگون نے ٹیسٹ کی ناکامی کا جائزہ لینا شروع کر دیا۔

بڑی طاقتوں ميں ميزائل ٹيکنالوجی ميں برتری کی جنگ میں سپر طاقت امريکا کو اس وقت بڑا جھٹکا لگا جب اس کا ہائپر سونک ميزائل کا تجربہ ناکام ہوگيا جبکہ اس سے قبل چين اور روس ہائپر سونک ٹيکنالوجی کے کامياب تجربات کرچکے ہيں۔

پينٹاگون نے ميڈيا کو جاری کردہ بيان ميں بتايا کہ ميزائل کو لے جانے والا راکٹ صحيح کام نہ کرسکا۔

خیال رہے کہ ہائپر سونک ميزائل آواز کی رفتار سے کئی گنا تيزہوتے ہيں جو ایٹمی مواد ليکر فضا ميں نچلی سطح پرسفر کرتے ہيں اور دفاعی نظام سے بچنے کے ليے راستہ تبديل کرنے کی صلاحيت بھی رکھتے ہيں۔

واضح رہے کہ چند روز قبل ہی ذرائع ابلاغ میں اس طرح کی خبریں شائع ہوئی تھیں کہ چین نے جوہری ہتھیاروں سے لیس ایک ہائپرسونک گلائڈ گاڑی کا کامیاب تجربہ کیا ہے جس پر امریکی صدر جو بائیڈن نے بھی اپنی تشویش کا اظہار کیا تھا۔

فنانشل ٹائمز کی ایک رپورٹ کے مطابق اگست میں چین کی جانب سے کیے جانے والے اس تجربے میں جوہری صلاحیت کے حامل راکٹ کو لانچ کیا گیا جس نے تقریباً کرہ ارض کا چکر لگایا۔

فنانشل ٹائمز نے گزشتہ ہفتے اپنی ایک رپورٹ میں کہا تھا کہ مذکورہ راکٹ خلا میں پرواز کے دوران پورے گلوب کا چکر لگا کر نیچے گرا تاہم چین کی وزارت دفاع نے اس رپورٹ کو مسترد کردیا ہے۔

امریکا اور اس کے اتحادی بھی ہائپرسونک ہتھیار بنانے کی اپنی رفتار تیز تر کر رہے ہیں تاکہ چین اور روس جیسے ممکنہ مخالفین سے مقابلہ کیا جا سکے۔

WhatsApp FaceBook
تازہ ترین
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube