Saturday, October 23, 2021  | 16 Rabiulawal, 1443

ٹوئٹر انڈیا کےسربراہ کیخلاف مقدمہ درج

SAMAA | - Posted: Jun 30, 2021 | Last Updated: 4 months ago
SAMAA |
Posted: Jun 30, 2021 | Last Updated: 4 months ago

فوٹو: اے پی

بھارتی حکومت اور ٹوئٹر کے مابین تنازع مزید شدت اختیار کرگیا، ایک ماہ کے دوران ٹوئٹر پر دوسرا مقدمہ درج کرلیا گیا۔

وائس آف امریکا کی رپورٹ کے مطابق بھارت کے نقشےمیں کشمیر اور لداخ کو شامل نہ کرنے پر ٹوئٹر انڈیا کے سربراہ کے خلاف مقدمہ درج کرادیا گیا ہے۔

بھارت میں ٹوئٹر کے سربراہ منیش مہیشوری کے خلاف ریاست اترپردیش میں مقدمہ درج کیا گیا ہے۔ چند روز قبل بھی ایک مبینہ جھوٹی خبر کے حوالے سے ان کے خلاف ایف آئی آر درج کی گئی تھی۔

کسانوں کااحتجاج: 1200ٹوئٹر اکاؤنٹس بند کرنے کا حکم

ٹوئٹر سربراہ کیخلاف تازہ مقدمہ شدت پسند ہندو تنظیم بجرنگ دل سے وابستہ ایک سرکردہ کارکن پروین بھاٹی نے درج کروایا۔ جس میں غداری کی دفعات شامل کی گئی ہیں۔ مقدمہ کی ایف آئی آر میں ٹوئٹر کی نیوز پارٹنرشپ ہیڈ امریتا ترپاٹھی کو بھی نامزد کیا گیا ہے۔

ٹوئٹر پر بلیوٹِک کس طرح حاصل کیاجاسکتا ہے؟

حکام کا کہنا ہے کہ ٹوئٹر نے کیریئر سے متعلق اپنے صفحے پر دنیا کا جو نقشہ شائع کررکھا تھا اس میں لداخ سمیت جموں و کشمیر کے پورے متنازعہ علاقے کو بھارت سے الگ ایک علیحدہ آزاد ریاست کے طور پر دکھایا گیا تھا۔

نائیجیریا نےٹوئٹر پر غیرمعینہ مدت تک پابندی لگادی

بھارتی حکومت نے تمام سوشل میڈیا کمپنیوں کو نئے آئی ٹی ضابطوں پر عمل کرنے اور اس کے بارے میں متعلقہ عہدیداروں کو آگاہ کرنے کے لیے چھ ماہ کا وقت دیا تھا۔ ٹوئٹر نے آخری تاریخ 25 مئی تک حکومت کو کوئی جواب جمع نہیں کرایا تھا۔

WhatsApp FaceBook
تازہ ترین
ٹوئٹر، ٹوئٹر انڈیا، بھارت، جموں کشمیر، لداخ، چین، سوشل میڈیا
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube