نیوزی لینڈ حکومت کا طالبات کیلیے اہم اعلان

SAMAA | - Posted: Feb 18, 2021 | Last Updated: 2 months ago
SAMAA |
Posted: Feb 18, 2021 | Last Updated: 2 months ago

فوٹو: ٹوئٹر

نیوزی لینڈ کی حکومت نے رواں سال جون سے ملک کے تمام اسکولوں میں طالبات کو ایامِ ماہواری کے دوران سینیٹری اشیا مفت فراہم کرنے کا اعلان کردیا۔

 نیوزی لینڈ میں گزشتہ سال کرونا وائرس کی پہلی لہر کے دوران تجرباتی بنیادوں پر 15 اسکولوں میں 3 ہزار سے زائد طالبات کو ایامِ ماہواری کے دوران سینیٹری اشیا مفت فراہم کی گئی تھیں۔

منصوبے میں کامیابی کے بعد وزیرِاعظم جیسنڈا آرڈرن نے ملک کے تمام اسکولوں میں طالبات کو ایامِ ماہواری میں مفت سینیٹری اشیا فراہم کرنے کا اعلان کیا ہے۔

​ وزیرِاعظم جیسنڈا آرڈرن کے مطابق اسکولوں میں سینیٹری پروڈکٹس مفت دینے سے نہ صرف غربت میں کمی لائی جاسکتی ہے بلکہ اس منصوبے سے اسکولوں میں طالبات کی حاضری میں بھی اضافہ ہوگا اور بچیوں کی صحت پر مثبت اثرات مرتب ہوں گے۔

جیسنڈا آرڈرن کا کہنا تھا کہ اسکولوں میں مفت سینیٹری پروڈکٹس فراہم کرنے کے اس پروگرام پر 2024 تک 1 کروڑ 79 لاکھ ڈالرز سے زائد لاگت آئے گی۔

دوسری جانب نیوزی لینڈ کی وزیر برائے امورِ نسواں جین ٹینیٹی کا کہنا ہے کہ ایامِ مخصوصہ میں لڑکیوں کو شرمندگی، تعلیمی اداروں سے غیرحاضری، مالی اخراجات میں اضافے اور آگاہی کی کمی جیسے مسائل کا سامنا کرنا پڑتا ہے۔ تاہم اب ان کے بقول حکومتی اقدام کے نتیجے میں طالبات کے ان مسائل میں کمی ہوگی۔

WhatsApp FaceBook

آپ کے تبصرے :

Your email address will not be published.

متعلقہ خبریں
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube