جوہری معاہدہ: اسرائیل نےایران پر حملے کی تیاری کرلی

SAMAA | - Posted: Jan 27, 2021 | Last Updated: 3 months ago
SAMAA |
Posted: Jan 27, 2021 | Last Updated: 3 months ago

فوٹو: یروشلم پوسٹ

اسرائیلی فوج کے چیف آف اسٹاف جنرل اپپوو نے نومنتخب بائیڈن انتظامیہ کو خبردار کرتے ہوئے ایران کے ساتھ جوہری معاہدہ کرنے کی صورت میں ایران پر حملے کی دھمکی دیدی۔

یاہو نیوز کی رپورٹ کے مطابق اسرائیلی فوج کے چیف آف اسٹاف لیفٹیننٹ جنرل اییوو نے تل ابیب یونیورسٹی کے انسٹی ٹیوٹ برائے نیشنل سیکیورٹی اسٹڈیز سے خطاب میں ایران پر حملے کا عندیہ دیتے ہوئے خبردار کیا کہ اگر امریکا نے جوہری معاہدے کو بحال کیا تو ایران پر حملوں میں اضافہ کردیں گے۔

اسرائیلی فوج کے چیف آف اسٹاف نے کہا کہ ایران کے ساتھ 2015 کے جوہری معاہدے میں کسی بھی طرح امریکی کی واپسی ایک بڑی غلطی ہوگی۔ اس بات کو مدنظر رکھتے ہوئے ہم نے ایران پر حملوں کے موجود منصوبوں کے علاوہ متعدد دیگر آپریشنل منصوبے تیار کرنے کی ہدایت کردی ہے۔ اب بس حملوں کی حکومت سے منظوری کا انتطار ہے۔

اسرائیلی چیف آف اسٹاف کا ایران پر حملے سے متعلق بیان اُس وقت سامنے آیا ہے جب نئے امریکی صدر جو بائیڈن کی جانب سے ایران کے ساتھ جوہری معاہدے کی سابق پالیسی میں تبدیلی کا عندیہ دیا گیا تھا۔

اس سے قبل بائیڈن انتظامیہ اس بات کا عندیہ دے چکے ہیں کہ وہ کچھ تبدیلیوں کے ساتھ ایران کے ساتھ جوہری معاہدے کو بحال کرنے کی کوشش کریں گے۔

WhatsApp FaceBook

آپ کے تبصرے :

Your email address will not be published.

متعلقہ خبریں
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube