Saturday, September 25, 2021  | 17 Safar, 1443

صائمہ محسن: امریکا کی پہلی مسلم وفاقی پراسیکیوٹر مقرر

SAMAA | - Posted: Jan 25, 2021 | Last Updated: 8 months ago
SAMAA |
Posted: Jan 25, 2021 | Last Updated: 8 months ago

فوٹو: ٹوئٹر

امریکا میں پہلی بار پاکستانی نژاد مسلمان خاتون کو وفاقی پراسیکیوٹر مقرر کردیا گیا۔

دی نیوز انٹرنیشنل کی نیوز کے مطابق امریکا میں پہلی بار پاکستانی نژاد مسلمان خاتون صائمہ محسن کو مشی گن میں وفاقی پراسیکیوٹر مقرر کردیا گیا ہے۔

موجودہ وفاقی پراسیکیوٹر میتھیو اشنائڈر یکم فروری کو اپنے عہدے سے مستعفی ہوجائیں گے جس کے بعد یہ عہدہ 52سالہ پاکستانی قانون دان سنبھال لیں گی۔ اشنائڈر کو 2018ء میں ٹرمپ نے مقرر کیا تھا۔

فوٹو: واشنگٹن پوسٹ

موجودہ وفاقی پراسیکیوٹر نے عہدے سے مستعفی ہونے کا اعلان کرتے ہوئے کہا کہ خوشی ہے میرے بعد ایک قابل پراسیکیوٹر کو اپنی خدمات دینے کا موقع مل رہا ہے جو پہلی تارک وطن مسلم خاتون وفاقی پراسیکیوٹر بنیں گی۔

انھوں نے مزید کہا کہ صائمہ ایک متحرک ایڈوکیٹ اور انتظامی امور کی خداد داد صلاحیتوں کی حامل ہیں۔

واضح رہے کہ پاکستانی نژاد صائمہ محسن نے ریاست نیوجرسی کے رٹیگرز یونیورسٹی سے قانون کی ڈگری حاصل کی، 2002 سے امریکا کے محکمہ انصاف کے ساتھ منسلک ہیں اور اس وقت اٹارنی آفس میں ملازمت کررہی ہیں اس کے علاوہ وائلنٹ اینڈ آرگنائزڈ کرائم یونٹ، ڈرگ ٹاسک فورس اور جنرل کرائمز یونٹ میں فرائض سرانجام دے چکی ہیں۔

WhatsApp FaceBook
تازہ ترین
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube