Wednesday, October 27, 2021  | 20 Rabiulawal, 1443

کروناوائرس کی 90فیصد کارآمد ویکسین تیار، دواساز کمپنیوں کا دعویٰ

SAMAA | - Posted: Nov 9, 2020 | Last Updated: 12 months ago
SAMAA |
Posted: Nov 9, 2020 | Last Updated: 12 months ago

دو بڑی دوا ساز کمپنیوں نے کرونا ویکسین کی کامیابی کا دعویٰ کردیا۔ کمپنیوں کا کہنا ہے کہ ویکسین کرونا وائرس سے بچاؤ میں 90 فیصد کار آمد ہے۔

غیر ملکی خبر رساں ادارے اے ایف پی کے مطابق 2 بڑی دوا ساز کمپنيوں نے کرونا ویکسین کی کی کامیابی کا دعویٰ کیا ہے۔ فائزر اور بایو این ٹیک نامی کمپنیوں کا کہنا ہے کہ انہوں نے ایسی دوا تیار کرلی ہے جو کرونا وائرس سے بچاؤ میں 90 فیصد تک کار آمد ہے۔

اے ایف پی کے مطابق دوا ساز کمپنیوں کا کہنا ہے کہ کرونا وائرس سے بچاؤ کی ويکسين لگنے کے 7 دن ميں 90 فيصد اینٹی باڈيز بن جائيں گے جبکہ 28 دنوں ميں 2 ویکسین لگائی جائيں گی۔ کمپنیوں کا دعویٰ ہے کہ ويکسين کی دو ڈوز لگنے سے کرونا سے بچاؤ ممکن ہوسکے گا۔

فائزر کے چیئرمین اور سی ای او ایلبرٹ بورلا نے اپنے بیان میں کہا ہے کہ کرونا ویکسین کے ٹرائل کے تیسرے مرحلے میں اس کے نتائج سے پتہ چلتا ہے کہ یہ دوا وباء کو روکنے میں مددگار ہے۔ دوا ساز کمپنیوں نے اسے سائنس اور انسانیت کیلئے بڑا دن قرار دیا ہے۔

ایلبرٹ کا مزید کہنا ہے کہ ہم صحت سے متعلق عالمی بحران کے خاتمے کیلئے لوگوں بڑا بریک تھرو دینے کیلئے ایک قدم اور آگے بڑھ گئے ہیں، یہ کامیابی ایسے وقت میں ملی ہے جب دنیا کو اس کی زیادہ ضرورت ہے۔

دنیا بھر میں کرونا وائرس کی وباء کی دوسری لہر پھیل رہی ہے، امریکا سمیت کئی ممالک میں کیسز میں تیزی سے اضافہ ہورہا ہے، اسپتالوں کے آئی سی یوز بھر رہے ہیں اور اموات بھی بڑھ رہی ہیں۔

ویکسین کی فراہمی سے متعلق کمپنیز کا کہنا ہے کہ وہ رواں سال ہی عالمی سطح پر 5 کروڑ اور 2021ء میں ایک ارب 30 کروڑ ڈوزز مہیا کرنے میں کامیاب ہوجائیں گے۔

اس ویکسین کے تیسرے مرحلے کی طبی جانچ کا آغاز رواں برس جولائی کے اواخر سے ہوا تھا، جس میں 43 ہزار 500 لوگ شریک ہوئے۔ دونوں کمپنیوں کا کہنا ہے کہ وہ اس ویکسین کے استعمال کا اجازت نامہ حاصل کرنے کیئے آئندہ ہفتے یو ایس فوڈ اینڈ ڈرگ ایڈمنسٹریشن میں باقاعدہ درخواست جمع کرائیں گے۔

فائزر اور بایو این ٹیک پہلے ہی 1.95 بلین امریکی ڈالر مالیت کا ایک معاہدہ کرچکے ہیں، جس کے تحت انہوں نے اپنی ویکسین کی 100 ڈوزز یا خوراکیں امریکا کو فراہم کرنا ہیں۔

ان کمپنیوں نے یورپی یونین، برطانیہ، کینیڈا اور جاپان کے ساتھ بھی معاہدے کررکھے ہیں، اس ویکسین کی تیاری کا آغاز پہلے ہی کردیا گیا ہے تاکہ وقت بچایا جاسکے۔

دنیا بھر میں کرونا وائرس سے متاثرہ افراد کی تعداد 5 کروڑ 8 لاکھ 73 ہزار سے تجاوز کر چکی ہے جبکہ 12 لاکھ 64 ہزار سے زائد لقمۂ اجل بن چکے ہیں، تین کروڑ 58 لاکھ 65 ہزار مریض صحتیاب ہوچکے ہیں تاہم ایک کروڑ 37 لاکھ 44 ہزار 100 سے زائد مریض اب بھی اسپتالوں میں داخل ہیں۔

WhatsApp FaceBook
تازہ ترین
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube