Thursday, December 3, 2020  | 16 Rabiulakhir, 1442
ہوم   > بین الاقوامی

ترک صدر کی تنخواہ اضافے کے بعد کتنی ہوگئی؟

SAMAA | - Posted: Oct 22, 2020 | Last Updated: 1 month ago
SAMAA |
Posted: Oct 22, 2020 | Last Updated: 1 month ago

فوٹو: اے ایف پی

ترک صدر رجب طیب اردوان کی کی تنخواہ میں 8 فیصد اضافہ کردیا گیا۔

ترکی کے آئندہ مالی سال میں صدر طیب اردوان کی ماہانہ تنخواہ 88 ہزار ترکش لیرا ہوگی۔ ترکی کا نیا مالی سال یکم جنوری سے شروع ہوکر 31دسمبر کو ختم ہوتا ہے۔

پارلیمنٹ کو بھجوائے گئے بجٹ دستاویز کے مطابق یکم جنوری سے شروع ہونے والے مالی سال میں صدر اردوان کی ماہانہ تنخواہ 11،275 امریکی ڈالر (88 ہزار ترکش لیرا) مقرر کی گئی ہے۔

جسٹس اینڈ ڈیولپمنٹ پارٹی کی طرف سے جمع کرائی گئی بجٹ دستاویز کے مطابق صدر کی یومیہ تنخواہ 2،933 ترکش لیرا بنتی ہے جو ترکی میں کم سے کم اجرت سے 3گنا زیادہ ہے۔

صدر کے دفتری اخراجات کے لئے آئندہ مالی سال میں 88 کروڑ 60 لاکھ ترکش لیرا کا بجٹ مانگا گیا ہے۔

سال 2014 میں جب صدر ایردوان نے اقتدار سنبھالا تھا اس کے بعد سے 2018 تک صدر کے دفتر کے اخراجات میں 550 فیصد اضافہ ریکارڈ کیا گیا ہے۔

ان چار برسوں میں صدر اردوان کے دفتر کے اخراجات 3.5 ترکش لیرا کی سطح پر پہنچ گئے ہیں جبکہ پریذیڈنسی کے یومیہ اخراجات ایک کروڑ ترکش لیرا ہیں۔

WhatsApp FaceBook

آپ کے تبصرے :

Your email address will not be published.

متعلقہ خبریں
WhatsApp FaceBook
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube