Wednesday, September 30, 2020  | 11 Safar, 1442
ہوم   > بین الاقوامی

بیٹی کو ڈرانے پر یوٹیوبر میاں بیوی کیخلاف مقدمہ

SAMAA | - Posted: Sep 15, 2020 | Last Updated: 2 weeks ago
SAMAA |
Posted: Sep 15, 2020 | Last Updated: 2 weeks ago

مصر کی مشہور یوٹیوبر جوڑی کو ڈراؤنی شکل بناکر اپنی بیٹی کو ڈرانا مہنگا پڑگیا۔ بچوں کے حقوق کیلئے کام کرنے والے ادارے نے دونوں کے خلاف قانونی کارروائی کا اعلان کردیا۔

عرب نشریاتی ادارہ العربیہ کے مطابق یوٹیوبر احمد حسن کی بیوی نے اپنی ایک کم سن بچی کو ڈرانے اور اسے رُلانے کے لیے چہرے پر سیاہ رنگ مل کر ڈراونی شکل بنائی اور بال بھی الجھا دیے تاکہ خوف سے روتی بچی کی ویڈیو بنا کر یوٹیوب پر اپ لوڈ کرے اور اس کے نتیجے میں زیادہ سے زیادہ پیسے کماسکیں۔

مگر ویڈیو یوٹیوب پر آنے کے بعد یہ ناٹک میاں بیوی کو مہنگا پڑگیا ہے۔ سماجی رابطوں کی ویب سائٹس پر شہریوں نے بچی کے ساتھ اس سلوک پر شدید غم و غصے کا اظہار کیا ہے جبکہ بچوں‌ کے حقوق کے لیے کام کرنے والی تنظیموں نے احمد حسن پر الزام عائد کیا ہے کہ وہ کاروبای مقصد کے لیے کمسن بچی کو استعمال کرنے کا گھناؤنا طریقہ اختیار کر رہے ہیں۔

یمن میں‌ بچوں اور ماں کے حقوق کے لیے کام کرنے والی کونسل نے یوٹیوبر احمد حسن اور ان کی اہلیہ کے خلاف سخت قانونی کارروائی کا اعلان کیا ہے۔ ان کا کہنا ہے کہ یوٹیوبر اور اس کی اہلیہ نے محض اپنے کاروباری فائدے کی خاطر بچی کو ہراساں کیا ہے۔

کونسل کی سیکرٹری جنرل ڈاکٹر سحر السنباطی نے بتایا کہ ویڈیو وائرل ہونے کے فوری بعد اس معاملے کی عدالتی تحقیقات شروع کر دی گئی ہیں۔ دونوں‌ میاں بیوی پر گزشتہ برس انسانی اسمگلنگ کو فروغ دینے کی شکایات کو بھی اس کیس میں شامل کیا گیا ہے۔

WhatsApp FaceBook

آپ کے تبصرے

Your email address will not be published.

متعلقہ خبریں
WhatsApp FaceBook
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube