Wednesday, August 5, 2020  | 14 Zilhaj, 1441
ہوم   > بین الاقوامی

کشمیری قوم کے ہیرو اور عظیم مجاہد برہان وانی کی چوتھی برسی

SAMAA | - Posted: Jul 8, 2020 | Last Updated: 4 weeks ago
SAMAA |
Posted: Jul 8, 2020 | Last Updated: 4 weeks ago

وادی میں مکمل ہڑتال

تحریک آزادی کشمیر کے عظیم مجاہد ، حريت رہنما اور حزب المجاہدین برہان وانی کی چوتھی برسی آج منائی جا رہی ہے۔ شہید کی چوتھی برسی پر "برہان وانی" ٹوئٹر پر پورا دن ٹاپ ٹرینڈ کرتا رہا۔

بھارتی فوج کے ظلم و ستم سے تنگ آ کر برہان مظفر وانی نے صرف 15 برس کی عمر میں قلم چھوڑ کر بندوق اٹھائی۔ دم توڑتی تحریک آزادی کشمیر میں نئی روح پھونکی اور اپنے حصے کا شمع جلا کر جامِ شہادت نوش کیا۔

وہ اپنی محنت سے جلد ہی تحریک آزادی کے عظیم مجاہد بن گئے اور چند برسوں میں کمانڈر کے عہدے تک پہنچ گئے۔ شہادت کے وقت ان کی عمر 21 سال تھی۔

برہان وانی نے سوشل میڈیا کے ذریعے آزادی کے پیغام کو گھر گھر پہنچا دیا اوربڑی تعداد میں کشمیری نوجوان حزب المجاہدین میں شامل ہونے لگے۔ برہان وانی نے کشمیری پنڈتوں کو واپس آنے کی دعوت دی اور ہندو یاتریوں کے تحفظ کو یقینی بنایا جس سے ان کی مقبولیت میں مزید اضافہ ہوگیا۔

برہان وانی کی چوتھی برسی کے موقع پر مقبوضہ کشمير میں آج 8 جولائی کو مکمل ہڑتال کی کال دی گئی ہے، جب کہ وادی بھر ميں تمام تجارتی مراکز بند ہیں۔ حريت قيادت کی اپيل پر قابض حکومت کے خلاف آج مظاہرے کيے جائیں گے۔

اس سے قبل مجاہد لیڈر برہان وانی کی پہلی برسی کے موقع پر بھارت نے مقبوضہ وادی کو چھاؤنی میں تبدیل کردیا تھا۔ تاہم لہو سے چراغ جلانے والے برہان وانی کے لہو سے چمکتی تحریک اب بھی سنگریز وادی میں پورے آب و تاب سے جاری ہے۔

واضح رہے کہ بھارتی فوج نے 8 جولائی 2016 کو سری نگر سے 60 کلو میٹر کے فاصلے پر واقع کوکرناگ کے علاقے میں کارروائی کے دوران برہان وانی کو شہید کر دیا تھا۔

برہانی وانی کی شہادت کے بعد مقبوضہ کشمیر کے بیشتر اضلاع میں کئی ماہ تک مظاہرے جاری رہے، جب کہ بھارتی فوج نے مظاہرین پر پیلٹ گنز کا استعمال کیا جس میں 85 کشمیری شہید، جب کہ ہزاروں افراد زخمی ہوئے۔

WhatsApp FaceBook

آپ کے تبصرے

Your email address will not be published.

متعلقہ خبریں
WhatsApp FaceBook
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube