Wednesday, July 8, 2020  | 16 ZUL-QAADAH, 1441
ہوم   > بین الاقوامی

چاقو بردار حملہ آور قرنطینہ میں ’کھسک‘ گیا تھا

SAMAA | - Posted: Jun 29, 2020 | Last Updated: 1 week ago
SAMAA |
Posted: Jun 29, 2020 | Last Updated: 1 week ago

اسکاٹ لینڈ میں چاقو کے وار کرکے چھ افراد کو زخمی کرنے والے ملزم کی شناخت ہوگئی ہے۔ پولیس کے مطابق قرنطینہ میں تنہائی کا شکار ہونے کے باعث ملزم کا ذہنی توازن خراب ہوگیا تھا۔

برطانوی اخبار دی گارجین کی رپورٹ کے مطابق اسکاٹ لینڈ کی پولیس نے جمعہ کو گلاسکو میں چھ افراد کو چاقو کے وار کرکے زخمی کرنے والے ملزم کی تصاویر اور دیگر شناختی تفصیلات جاری کی ہیں۔ یاد رہے ملزم کو پولیس نے گولی مار دی تھی جس کے نتیجے میں وہ ہلاک ہوگیا تھا۔

پولیس کے مطابق ملزم کا نام بدرالدین عبداللہ آدم بتایا ہے اور اس کی عمر 28 سال کے لگ بھگ ہے۔

پولیس حکام کے مطابق حملے کا پس منظر دہشت گردی نہیں بلکہ اور ملزم کے ذہنی توازن کی خرابی ہوسکتی ہے۔ وہ کرونا کی وجہ سے ایک ہوٹل میں کئی ہفتوں سے تنہا رہا تھا مگر وہاں خوش نہیں تھا۔

ملزم سوڈان سے فرانس اور وہاں سے گلاسکو آیا مگر حکام نے نئے قواعد کے تحت اسے بھی دیگر پناہ گزینوں اور سیاسی پناہ کے درخواست گزاروں کے ساتھ مخصوص ہوٹل میں ٹھہرایا۔

ہوٹل میں اس کے ساتھ رہائش پذیر سراج نامی شخص نے پولیس کو بتایا کہ وہ ہوٹل میں دوسرے پناہ گزینوں کے شور شرابے کی وجہ سے کافی پریشان تھا اور اس نے کئی بار کہا کہ وہ ان پر چاقو سے حملہ کرے گا۔ سراج نے ملزم کے بارے میں ہوٹل انتظامیہ کو بھی آگاہ کردیا تھا۔

WhatsApp FaceBook

آپ کے تبصرے

Your email address will not be published.

متعلقہ خبریں
WhatsApp FaceBook
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube